உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    اومیکرون کے خطرے کے پیش نظر ممبئی میں 2 دن تک تمام بڑے اجلاس پر پابندی عائد، دو دن کیلئے دفعہ 144 نافذ

    Corona Omicron variant Case in India: قابل ذکر ہے کہ اومیکرون کیسز کے پیش نظر 11 اور 12 دسمبر کو ممبئی میں دفعہ 144 نافذ کر دی گئی ہے۔ اس دوران لوگوں اور گاڑیوں کی ریلیاں، مورچہ، جلوس پر پابندی لگا دی گئی ہے۔ ریاست میں اب تک اومیکرون کے کل 17 معاملے رپورٹ یو چکے ہیں۔

    Corona Omicron variant Case in India: قابل ذکر ہے کہ اومیکرون کیسز کے پیش نظر 11 اور 12 دسمبر کو ممبئی میں دفعہ 144 نافذ کر دی گئی ہے۔ اس دوران لوگوں اور گاڑیوں کی ریلیاں، مورچہ، جلوس پر پابندی لگا دی گئی ہے۔ ریاست میں اب تک اومیکرون کے کل 17 معاملے رپورٹ یو چکے ہیں۔

    Corona Omicron variant Case in India: قابل ذکر ہے کہ اومیکرون کیسز کے پیش نظر 11 اور 12 دسمبر کو ممبئی میں دفعہ 144 نافذ کر دی گئی ہے۔ اس دوران لوگوں اور گاڑیوں کی ریلیاں، مورچہ، جلوس پر پابندی لگا دی گئی ہے۔ ریاست میں اب تک اومیکرون کے کل 17 معاملے رپورٹ یو چکے ہیں۔

    • Share this:
      ملک میں ایک بار پھر کورونا کا خطرہ بڑھتا جا رہا ہے۔ کورونا کے نئے ویریئنٹ Omicron کے نئے کیسز نے ایک بار پھر ملک میں خوف کی فضا پیدا کر دی ہے۔ کورونا کی پچھلی دو لہروں کی طرح تیسری لہر بھی مہاراشٹر پر حاوی دکھائی دے رہی ہے۔ ملک میں اب تک اومیکرون کے 32 کیس رپورٹ ہوئے ہیں، جن میں سے 17 کیس صرف مہاراشٹر میں پائے گئے ہیں۔ اس کے ساتھ ہی ممبئی میں پچھلے 24 گھنٹوں میں اومیکرون کے 3 معاملے سامنے آئے ہیں۔ خبر رساں ایجنسی پی ٹی آئی کے مطابق اومیکرون کے خطرے کے پیش نظر ممبئی میں اگلے دو دنوں کے لیے تمام بڑے اجتماعات پر پابندی لگا دی گئی ہے۔ ممبئی پولیس سے موصولہ اطلاع کے مطابق اومیکرون کے بڑھتے ہوئے معاملات کو دیکھتے ہوئے آئندہ دو دنوں کے لیے تمام قسم کے اجتماعات، گاڑیوں کی ریلیوں اور احتجاجی مارچوں پر مکمل پابندی عائد کر دی گئی ہے۔

      ڈپٹی کمشنر آف پولیس (آپریشنز) کے جاری کردہ حکم نامے کے مطابق یہ پابندی ہفتہ اور اتوار کو 48 گھنٹوں کے لیے نافذ العمل رہے گی۔ انہوں نے کہا کہ جس طرح سے  کورونا کے اومیکرون ویرینٹ کے مریضوں مل رہے ہیں اس خطرے کو روکنے کیلئے  امراوتی، مالیگاؤں اور ناندیڑ میں تشدد کے پیش نظر امن و امان کو برقرار رکھنے کے مقصد سے یہ فیصلہ لیا گیا ہے۔

      بتادیں کہ جمعہ کو مہاراشٹر میں ساڑھے تین سال کی بچی سمیت اومیکرون کے سات معاملے سامنے آئے۔ ان میں سے تین کیس ممبئی کے ہیں جن میں تنزانیہ، یو کے اور
      جنوبی افریقہ-نیروبی کی سفری تاریخ ہے۔ یہ تمام مرد ہیں جن کی عمریں 48، 25 اور 37 سال ہیں۔

      ممبئی میونسپل کارپوریشن کے مطابق تنزانیہ Tanzania  سے لوٹا  48 سالہ شخص دھاراوی کا رہائشی ہے۔ بتایا جا رہا ہے کہ جب وہ ممبئی آئے تھے تو وہ کورونا مثبت نہیں تھے اور آئسولیشن میں تھے۔ کچھ دنوں تک کورنٹائن میں رہنے کے بعد ان کی طبیعت بگڑ گئی اور جانچ کرنے پر معلوم ہوا کہ ان میں اومیکرون کی علامات ہیں۔ کورونا مثبت شخص نے اب تک ویکسین کی کوئی خوراک نہیں لی ہے جب کہ اس کے رابطے میں آنے والے دو افراد کی رپورٹس منفی آئی ہیں۔


      قابل ذکر ہے کہ اومیکرون کیسز کے پیش نظر 11 اور 12 دسمبر کو ممبئی میں دفعہ 144 نافذ کر دی گئی ہے۔ اس دوران لوگوں اور گاڑیوں کی ریلیاں، مورچہ، جلوس پر پابندی لگا دی گئی ہے۔ ریاست میں اب تک اومیکرون کے کل 17 معاملے رپورٹ یو چکے ہیں۔ ممبئی پولیس نے جمعہ کو ممبئی کمشنریٹ علاقے میں سی آر پی سی کی دفعہ 144 نافذ کر دی ہے۔ جس کے باعث آئندہ دو روز کے لیے ریلیوں اور مظاہروں پر پابندی عائد کر دی گئی ہے۔ ایک اہلکار نے بتایا کہ ڈپٹی کمشنر آف پولیس کی طرف سے جاری کیا گیا حکم ہفتہ اور اتوار کو 48 گھنٹے تک نافذ رہے گا۔

      قومی، بین الاقوامی اور جموں وکشمیر کی تازہ ترین خبروں کےعلاوہ تعلیم و روزگار اور بزنس کی خبروں کے لیے نیوز18 اردو کو ٹویٹر اور فیس بک پر فالو کریں ۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: