ہوم » نیوز » عالمی منظر

پاکستانی قیدی کا جے پورجیل میں قتل، ٹی وی کی آوازبڑھانے پرقیدیوں میں ہوا تھاجھگڑا

راجستھان کی راجدھانی جے پورمیں جیل میں بند ایک پاکستانی قیدی کے قتل کامعاملہ سامنے آیا ہے۔ 

  • Share this:
پاکستانی قیدی کا جے پورجیل میں قتل، ٹی وی کی آوازبڑھانے پرقیدیوں میں ہوا تھاجھگڑا
پاکستانی قیدی شکراللہ کا جے پورجیل میں قتل

راجستھان کی دارالحکومت جے پورکی سینٹرل جیل میں بند ایک پاکستانی قیدی کے قتل کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ جے پورپولیس کے مطابق جیل میں اس قتل کے پیچھے کچھ قیدیوں میں آپسی کہا سنی اورتنازعہ کے بعد شروع ہوا جھگڑا تھا۔ جے پورپولیس کے ایڈیشنل کمشنرلکشمن گوڑنے بتایا کہ ٹی وی دیکھنے کے دوران یہ جھگڑا ہوا۔


قتل کولے ابتدائی جانچ میں 4 قیدیوں کے نام سامنے آئے ہیں۔ شکراللہ کے ساتھ موجود دیگرپاکستانی قیدیوں سے بھی پوچھ گچھ کی جارہی ہے۔ ایڈیشنل کمشنرگوڑنے بتایا کہ جیل میں ٹی وی دیکھنے کے دوران آواز بڑھانے کولے کرقیدیوں میں جھگڑا شروع ہوا تھا۔ قیدی کی شناخت لشکرطیبہ سے منسلک دہشت گرد شکراللہ کے طورپرہوئی ہے۔ شکراللہ کے ساتھ جے پورجیل میں 8 دہشت گرد بند تھے۔


اے ڈی جے کورٹ نے 30 نومبر 2017 کو تمام دہشت گردوں کوعمرقید کی سزا سنائی تھی۔ سال 2010 میں اے ٹی ایس نے ان دہشت گردوں کو گرفتارکیا تھا، جنہیں بعد میں دہشت گردی کے لئے فنڈ جمع کرنے میں قصوروارپایا گیا۔ ان میں سے ایک قیدی یعنی شکراللہ کی دیگرقیدیوں کے ساتھ جھگڑے میں موت ہونے کی بات بتائی جارہی ہے۔




پاکستانی قیدی کی موت کی اطلاع کے بعد پولیس کمشنراورجیل انتظامیہ کے افسران موقع پرموجود ہیں۔ ڈی جی پی این آرکے ریڈی اورڈی آئی جی جیل روپیندرسنگھ کے مطابق پاکستانی قیدی کی موت کی اطلاع توملی ہے، لیکن فی الحال موت کے وجوہات کی جانچ کی جارہی ہے۔
First published: Feb 20, 2019 06:51 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading