ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

مہاراشٹر : لاک ڈاؤن کا مذاق اڑانے والے دو ٹک ٹاک نوجوانوں کو پولیس نے کیا گرفتار

ڈونگری میں دو نوجوانوں پر کارروائی کے بعد پولیس نے شیواجی نگر میں ٹاک ٹک بنانے والے ایسے دو نوجوانوں کو گرفتار کر نے کا دعوی کیا ہے جنہوں نے ٹک ٹاک پر پولیس کا مذاق اڑانے کی کوشش کی تھی۔

  • Share this:
مہاراشٹر : لاک ڈاؤن کا مذاق اڑانے والے دو ٹک ٹاک نوجوانوں کو پولیس نے کیا گرفتار
یوگی حکومت کے وزیر برائے میڈیکل ایجوکیشن سریش کھنہ نے سماجی فاصلوں کی دھجیاں اڑاکر رکھ دی ہیں۔ علامتی تصویر

ممبئی۔ لاک ڈاؤن کے دوران فارغ نوجوان ٹک ٹاک اور سوشل میڈیا کا زیادہ استعمال کر رہے ہیں۔ سوشل میڈیا پر افواہ پھیلانے اور سماج دشمنی کا مظاہرہ کرنے والے افراد کے خلاف مہاراشٹر پولیس نے سخت رخ اپنا رکھا ہے۔ ابھی تک پولیس سے مارپیٹ کرنے والے چار سو سے زیادہ افراد کو پولیس نے گرفتار کرلیا ہے۔ اب ممبئی پولیس نے بھی ٹک ٹاک پر پولیس کا مذاق بنانے والے ٹاک ٹک نوجوانوں پر اپنی کارروائی میں شدت پیدا کر دی ہے۔


ڈونگری میں دو نوجوانوں پر کارروائی کے بعد پولیس نے شیواجی نگر میں ٹاک ٹک بنانے والے ایسے دو نوجوانوں کو گرفتار کر نے کا دعوی کیا ہے جنہوں نے ٹک ٹاک پر پولیس کا مذاق اڑانے کی کوشش کی تھی۔ ٹک ٹاک میں ایک نوجوان نے یہ کہا تھا کہ لاک ڈاؤن کے سبب اس کی ایک دوست نے کہا ہے کہ وہاں پولیس مار رہے ہیں اس لئے آگے نہ جائیں تو اس نے کہا کہ سلیبرٹی یعنی اہم اشخاص کو بھلا کوئی کیسے مارے گا اور قہقہہ لگاتے ہوئے ویڈیو تیار کیا تھا۔ اس نے منہ پر ماسک بھی نہیں پہنا تھا جبکہ بی ایم سی نے اسے لازمی قرار دیا ہے۔ اس کے بعد ان دونوں ٹاک ٹک تیار کرنے والے نوجوانوں کو پولیس نے سبق سکھایا اور دونوں کو گرفتار کر لیا گیا۔ اس کے بعد ان دونوں سے ویڈیو تیار کیا گیا کہ جس میں دونوں نے معافی طلب کی اور کہا کہ لاک ڈاؤن کی ان سے خلاف ورزی ہوئی ہے اور ماسک بھی عوامی مقام پر نہیں پہنا تھا اس لئے انہیں گرفتار کر لیا گیا ہے اس لئے قانون کی پاسداری ضروری ہے۔


ڈونگری میں دو نوجوانوں پر کارروائی کے بعد پولیس نے شیواجی نگر میں ٹاک ٹک بنانے والے ایسے دو نوجوانوں کو گرفتار کر نے کا دعوی کیا ہے جنہوں نے ٹک ٹاک پر پولیس کا مذاق اڑانے کی کوشش کی تھی۔


لاک ڈاؤن پر ڈونگری میں اس سے قبل دو نوجوانوں نے ٹاک ٹک تیار کیا تھا جنہیں پولیس نے عبدالرحمن شاہ بابا کی درگاہ کے قریب سے پکڑا تھا اور بعد میں ان دونوں نے بھی معافی طلب کی تھی۔ اس ویڈیو میں ان دونوں نے ڈشم فلم کی ڈائیلاگ یہ عربیوں کی ڈونگری ہے اور پولیس کا مضکحہ اڑایا تھا جس کے بعد پولیس نے ان دونوں کو سوشل میڈیا اکاؤنٹ سے ٹریس کر لیا اور گرفتار کر لیا۔ اسی طرح گزشتہ 24گھنٹے اندر ہی دوسرے ٹک ٹاک تیار کر نے والے دونوں کو پولیس نے گرفتار کر لیا ہے۔ ان دونوں کے خلاف ممبئی پولیس کے ٹوئیٹر پر شکایت کی گئی تھی۔ اسی طرح سے پولیس نے ٹوئیٹر پر اس کا سخت نوٹس لیا اور لاک ڈاؤن کی توہین کرنے والوں کو سبق سکھانا شروع کردیا ہے۔ پولیس نے نوجوانوں سے یہ درخواست کی ہے کہ وہ اپنے ٹک ٹاک بنانے کے چکر میں پولیس یا انتظامیہ پر اگر کوئی غلط بیانی کر تے ہیں اور قانون شکنی سے کام لیتے ہیں تو ان کے خلاف سخت کارروائی ہوگی۔ اس کا نوٹس ممبئی کے پولیس کمشنر پرم بیر سنگھ نے بھی لیا ہے اور اس لئے اب ٹک ٹاک پر تھرکنے والے ان نوجوانوں پر کارروائی ہوگی جو پولیس یا سرکار کی توہین کرتے ہیں یا اس سے متعلق تضحیک آمیز کلمات کی ادائیگی کر کے تمسخر اڑاتے ہیں۔
Published by: Nadeem Ahmad
First published: Apr 22, 2020 06:08 PM IST