உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    کیا ممبئی کبھی شنگھائی بنے گی؟ CNN-News18 Town Hallمیں مہاراشٹر کے نائب وزیر اعلی فڑنویس نے دیا یہ جواب

    کیا ممبئی کبھی شنگھائی بنے گی؟ CNN-News18 Town Hallمیں مہاراشٹر کے نائب وزیر اعلی فڑنویس نے دیا یہ جواب

    کیا ممبئی کبھی شنگھائی بنے گی؟ CNN-News18 Town Hallمیں مہاراشٹر کے نائب وزیر اعلی فڑنویس نے دیا یہ جواب

    مہاراشٹر کے نائب وزیر اعلی دیویندر فڑنویس نے کہا کہ مہاراشٹر کی پچھلی سرکار نے صرف بدعنوانی کی ، وہی ان کا اہم موضوع تھا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Maharashtra | Mumbai
    • Share this:
      ممبئی : مہاراشٹر کے نائب وزیر اعلی دیویندر فڑنویس نے کہا کہ مہاراشٹر کی پچھلی سرکار نے صرف بدعنوانی کی ، وہی ان کا اہم موضوع تھا۔ مہاراشٹر انتظامیہ خاص طور سے مہاراشٹر کی پولیس ، ممبئی پولیس اپنے کام کیلئے جانی جاتی تھی، لیکن جس طرح کے معاملات سامنے آئے ، وزیر داخلہ جیل گئے، تبادلہ پوسٹنگ گھوٹالہ ہوا، مہاراشٹر میں کوئی نئی سرمایہ کاری نہیں آئی، پچھلی سرکار نے بدعنوانی کو چھوڑ کر کیا حاصل کیا ۔ پچھلی سرکار نے ممبئی کو شنگھائی بنانے کا اعلان کیا تھا، لیکن ایک بھی پروجیکٹ شروع نہیں کیا تھا ۔ انہوں نے یہ باتیں سی این این ۔ نیوز18 کے مشہور پروگرام ٹاون ہال کے نئے ایڈیشن میں کہیں ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: دمکا پٹرول واقعہ میں پولیس نے 10 دن کے اندر داخل کی چارج شیٹ، 25 لوگوں کو بنایا گیا گواہ


      دیویندر فڑنویس نے کہا کہ ہم ممبئی کو شنگھائی سے بہتر بنائیں گے ۔ ممبئی کو شنگھائی کیوں بنانا ہے؟ ممبئی ممبئی ہے ۔ ممبئی کا اپنا کلچر ہے ، اپنا ڈھانچہ ہے ۔ ممبئی کو ممبئی بنائیں گے اور شنگھائی سے بہتر بنائیں گے اور یہ کیا جاسکتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ پچھلی سرکار نے کووڈ بحران کے وقت فیس بک پر کام کیا ۔ مجھے نہیں پتہ کہ کووڈ کا انتظام اچھی طرح سے کیا گیا تھا یا نہیں، لیکن خبروں کو اچھی طرح سے مینیج کیا گیا تھا ۔ کورونا انتظامات پر سوالات اٹھانے والے کو بھی جیل بھیجا گیا ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: جودھپور میں امت شاہ نے کہا : غیر ملکی ٹی شرٹ پہن کر بھارت جوڑنے نکلے ہیں راہل بابا


      دیویندر فڑنویس نے کہا کہ مہاراشٹر میں سیاسی ناکامی اور بحران کیلئے صرف ادھو ٹھاکرے ذمہ دار ہیں ۔ شیوسینا کی تقسیم کیلئے ادھو ٹھاکرے کا طریقہ کار ذمہ دار ہے ۔ 30 ۔ 40 ممبران نے ایم وی اے چھوڑ دیا اور ادھو ٹھاکرے کو اس بارے میں کوئی جانکاری نہیں تھی ۔

      انہوں نے مزید کہا کہ ادھو ٹھاکرے نے عوامی مینڈیٹ کا مذاق بنایا ۔ جب ہم میں اتحاد میں لڑے تو ہر ریلی میں وزیر اعظم ، وزیر داخلہ اور پارٹی صدر، سبھی نے کہا کہ وزیر اعلی بی جے پی کا ہوگا ۔ ادھو جی ، وہ اسٹیج پر تھے اور انہوں نے تالی بھی بجائی ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: