اپنا ضلع منتخب کریں۔

    راہل کا سنسنی خیز الزام، مودی نے سہارا سے 6 ماہ میں 9 بار کروڑوں روپے لئے

    راہل نے کہا کہ پی ایم مودی نے گجرات کا وزیر اعلی رہنے کے دوران سہارا کمپنی سے 6 ماہ میں 9 بار پیسے لئے تھے۔

    راہل نے کہا کہ پی ایم مودی نے گجرات کا وزیر اعلی رہنے کے دوران سہارا کمپنی سے 6 ماہ میں 9 بار پیسے لئے تھے۔

    راہل نے کہا کہ پی ایم مودی نے گجرات کا وزیر اعلی رہنے کے دوران سہارا کمپنی سے 6 ماہ میں 9 بار پیسے لئے تھے۔

    • IBN Khabar
    • Last Updated :
    • Share this:
      مہسانا۔ کانگریس نائب صدر راہل گاندھی نے آج بالآخر اس الزام کا انکشاف کر ہی دیا جس میں انہوں نے کہا تھا کہ انہیں وزیر اعظم کے ذاتی بدعنوانی کی معلومات ہے۔ راہل نے کہا کہ پی ایم مودی نے گجرات کا وزیر اعلی رہنے کے دوران سہارا کمپنی سے 6 ماہ میں 9 بار پیسے لئے تھے۔ آئی ٹی کے چھاپے میں اس کا انکشاف ہوا تھا۔ انہوں نے باقاعدہ ریلی کے منچ سے چٹ لہراتے ہوئے یہ الزام لگایا۔

      راہل نے کہا کہ 2013 میں پڑے آئی ٹی کے چھاپے کے بعد سامنے آیا کہ سہارا نے نریندر مودی کو پیسہ دیا۔ سہارا کے لوگوں نے اپنی ڈائری میں لکھا ہے کہ ہم نے 6 ماہ میں 9 بار نریندر مودی جی کو پیسہ دیا ہے۔ آپ نے مجھے پارلیمنٹ میں بولنے نہیں دیا۔ آپ میرے سامنے کھڑے ہونے کو تیار نہیں تھے۔ پتہ نہیں کیا وجہ تھی؟

      کوئی بزنس چلتا ہے تو وہ اس کا ریکارڈ رکھتا ہے۔ کس کو کتنے پیسے دیے کتنے لئے۔ 22 نومبر 2014 کو سہارا میں ریڈ ہوئی۔ سہارا کے ریکارڈ میں جو لکھا تھا وہ بتاتا ہوں۔ 30 اکتوبر 2013 کو ڈھائی کروڑ مودی جی کو دیا گیا۔ 12 نومبر کو 5 کروڑ دیا گیا۔ 29 نومبر کو 5 کروڑ لکھا تھا۔ 6 دسمبر کو 5 کروڑ دیا گیا۔ 19 دسمبر کو 5 کروڑ، 14 جنوری 2104 کو 5 کروڑ، 28 جنوری کو 5 کروڑ، 22 فروری کو 5 کروڑ دیے گئے۔

      راہل نے کہا کہ چھ ماہ میں 9 بار سہارا نے مودی جی کو پیسہ دیا ہے۔ مودی جی بتائیے ڈھائی سال سے انکم ٹیکس کے پاس ہے۔ انکم ٹیکس نے کہا ہے اس پر تحقیقات ہونی چاہئے۔ اس طرف انکوائری کیوں نہیں ہوئی؟ یہ سچ ہے یا جھوٹ ملک کو بتائیے۔ آپ نے پورے ملک کو لائن میں رکھا، ان کی ایمانداری پر سوال اٹھایا۔ اب میں ملک کی جانب سے پوچھ رہا ہوں جو یہ انفارمیشن انکم ٹیکس کے پاس ہے، کیا یہ سچ ہے اور اس میں انکوائری کب ہوگی؟
      ایسا ہی ایک ریکارڈ برلا کمپنی کا ہے۔ مودی جی آپ وزیر اعظم ہیں، آپ کے اوپر سوال اٹھائے جا رہے ہیں اب آپ ملک کو بتا ئیں کہ یہ سچ ہے کہ نہیں؟ آپ ایک غیر جانبدارانہ تحقیقات اس معاملے میں کرائیے۔ برلا کا بھی ریکارڈ ہے۔ آپ پی ایم ہیں، آپ پر سوال ہے۔ انکم ٹیکس کے سائن ہیں۔ آپ خود بتائیے کہ یہ سچ ہے یا نہیں؟
      First published: