உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Rajasthan: کرولی میں کرفیو، بائیک ریلی پر پتھراو، 42 سے زیادہ زخمی، کثیر تعداد میں پولیس اہلکار تعینات

    Rajasthan: کرولی میں کرفیو، بائیک ریلی پر پتھراو، 42 سے زیادہ زخمی، کثیر تعداد میں پولیس اہلکار تعینات

    Rajasthan: کرولی میں کرفیو، بائیک ریلی پر پتھراو، 42 سے زیادہ زخمی، کثیر تعداد میں پولیس اہلکار تعینات

    Rajasthan karauli news: علاقہ میں انٹرنیٹ خدمات بند کردی گئی ہیں ۔ علاقہ میں کثیر تعداد میں سیکورٹی فورسیز کو تعینات کیا گیا ہے ۔ امن و امان برقرار رکھنے کی کوششیں کی جارہی ہیں ۔ ایس پی ، کلیکٹر سمیت دیگر افسران جائے واقعہ پر موجود ہیں ۔

    • Share this:
      کرولی : ہندو تنظیموں کی جانب سے کرولی شہر میں چیتر نوراتری کے پہلے دن بائیک ریلی نکالی گئی ، لیکن ریلی میں پتھراو کے بعد حالات خراب ہوگئے ۔ شہر کے مختلف راستوں سے ہوتے ہوئے یہ ریلی جیسے ہی کٹواڑا بازار پہنچی تو یہاں کچھ شرارتی عناصر نے اس پر پتھراو کردیا ۔ پتھراو میں دو فریق آمنے سامنے آگئے ۔ پتھراو میں 42 سے زیادہ لوگ زخمی بتائے جارہے ہیں ۔ زخمیوں کو ضلع میڈیکل میں بھرتی کرایا گیا ہے ۔ سنگین طور پر زخمی ایک شخص کو ریفر کردیا گیا ہے ۔ پتھراو میں کوتوالی تھانہ افسر سمیت چار پولیس اہلکار بھی زخمی ہوئے ہیں ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : ہندوستان میں نظر آیا رمضان المبارک کا چاند، لکھنو سے ہوئی تصدیق، اتوار کو پہلا روزہ


      علاقہ میں انٹرنیٹ خدمات بند کردی گئی ہیں ۔ علاقہ میں کثیر تعداد میں سیکورٹی فورسیز کو تعینات کیا گیا ہے ۔ امن و امان برقرار رکھنے کی کوششیں کی جارہی ہیں ۔ ایس پی ، کلیکٹر سمیت دیگر افسران جائے واقعہ پر موجود ہیں ۔ کشیدگی کے پیش نظر شہر میں کرفیو نافذ کردیا گیا ہے  ۔ پتھراو کے بعد لوگ مشتعل ہوگئے اور چھ دکانوں کو آگے کے حوالے کردیا ۔ ساتھ ہی دو بائیک بھی جلادی گئیں ۔ ابھی بھی علاقہ میں افراتفری کا ماحول ہے ۔ دکانیں پوری طرح سے جل کر خاکستر ہوگئیں ۔ جائے واقعہ پر 50 سے زیادہ پولیس افسران کے ساتھ 600 سے زیادہ پولیس اہلکار تعینات کردئے گئے ہیں ۔ وہیں جائے واقعہ پر موجود سبھی افسران نے لوگوں سے لا اینڈ آرڈر بنائے رکھنے کی اپیل کی ہے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : بدلنے جارہے ہیں گریٹر نوئیڈا کے سیکٹروں کے نام، لوگوں سے مشورہ لے کر دیا جائے گا نیا نام


      ریلی پر پتھراو کے بعد آئی جی پرسن کمار کھمیسرا کرولی پہنچ گئے ہیں ۔ پھوٹا کوٹ ، بھوڈارا بازار ، چھوٹی ہٹریا ، ہٹوارا میں بھی سیکورٹی فورسیز کو تعینات کیا جارہا ہے ۔ پالی میں بھی دفعہ 144 نافذ کردی گئی ہے ، جس کی وجہ سے یہاں سڑکوں پر کافی کم لوگ دکھائی دے رہے ہیں ۔ جمعہ کی رات سے ہی کرفیو ہونے کا اثر ہفتہ کو بھی صاف دیکھنے کو ملا ۔ شہر کی گلیوں اور چوراہوں پر پولیس گشت کرتی نظر آئی ۔

      ہفتہ کو صبح ہی کلیکٹریکٹ کے سامنے نعرے بازی کرنے والے تین نوجوانوں کو پولیس اٹھا کر لے گئی ۔ اس کے ساتھ ہی ایک دیگر نوجوان کو بھی پولیس نے پوچھ گچھ کیلئے پکڑا تھا ۔ وہیں شہر میں گھومنے والے لوگوں پر بھی پولیس کی گہری نظر رہی ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: