உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مہاراشٹر میں بند اور تشدد معاملہ، کئی نکات پر جانچ شروع

    رضا اکیڈمی کا بند صرف ممبئی کےلئے تھا اس نے مہاراشٹر بھر ہی نہیں بلکہ ملک میں تحریکی شکل کیسی اختیارکرلی کیا یہ بند منظم سازش کا ایک حصہ تو نہیں تھا۔

    رضا اکیڈمی کا بند صرف ممبئی کےلئے تھا اس نے مہاراشٹر بھر ہی نہیں بلکہ ملک میں تحریکی شکل کیسی اختیارکرلی کیا یہ بند منظم سازش کا ایک حصہ تو نہیں تھا۔

    رضا اکیڈمی نے ممبئی بندکا اعلان کیا تھا پوری ریاست میں بند کیسے ہواپولیس اور انٹلیجنس ایجنسی نے جانچ شروع کر دی ہے۔

    • Share this:
    ممبئی : ممبئی میں رضا اکیڈمی نے جو ممبئی بند کا جو اعلان کیا تھا اس کے پیغامات پورے ملک میں ٹوئیٹر سے لے کر سوشل میڈیا پر عام ہوئے تھے ان پیغامات کی اب جانچ شروع ہوگئی ہے کہ آیا یہ پیغام کس نوعیت سے عام کیا گیا اور بند کو کارگرد بنانے کےلئے بند کے لئے نکڑ میٹنگوں کا انعقاد کیا گیا تھا یا نہیں یا پھر ممبئی کے باہر بند کے معاملے میں کوئی میٹنگ ہوئی تھی ۔ ممبئی بند کے اعلان کے بعد پورے مہاراشٹر میں ہی نہیں بلکہ ملک بھر میں بند کیوں منایا گیا اس کے کیا اثرات تھے اور کس کے اشارے پر مہاراشٹر کے مختلف اضلاع میں بند کیا گیا تھا یہ تمام نکات پر اب ممبئی ہی نہیں بلکہ ریاستی انٹلیجنس محکمہ نے جانچ شروع کردی ہے۔ امراوتی میں جو تشدد برپا ہوا تھا اس میں مقامی رنجش بھی کارفرما تھی اور ایک دکاندار سے کسی کی ذاتی رنجش بھی تھی ایسی دکانوں کو بھی نشانہ بنایا گیا جس کی ذاتی دشمن اس دکان والے سے تھی امرائوتی ہی نہیں بلکہ مالیگائوں میں نشہ خوروں اور اوباش نوجوانوں نے بند کے مورچہ میں شامل ہوکر ہنگامہ آرائی کی تھی اور یہی وجہ ہے کہ پولیس کو موقع مل گیا اور پھر پولیس نے یہاں لاٹھی چارج کی اور بند کے دوران تشدد کے سبب سنگین دفعات کے تحت کیس بھی درج کئے گئے ہیں ۔

    رضا اکیڈمی کا بند صرف ممبئی کےلئے تھا اس نے مہاراشٹر بھر ہی نہیں بلکہ ملک میں تحریکی شکل کیسی اختیارکرلی کیا یہ بند منظم سازش کا ایک حصہ تو نہیں تھا۔ توہین رسالت کے خلاف مسلمانوں نے اپنی ضمیر اور ایمانی حمیت کا مظاہرہ کرتے ہوئے بند میں حصہ لیا تھا اور یہ بند اس قدر کامیاب رہا کہ پرامن بند کو تشدد کی زد میں لایا گیا اور کئی فرقہ پرست بھی اس بند میں شامل ہوکر اس پرامن بند کو پرتشدد کرنے کی سازش بھی انجام دی ہے۔ پولیس تفتیش میں کئی اہم سراغ بھی ملے ہیں جس میں یہ ثابت ہوتاہے کہ بند کے دوران فرقہ پرستوں نے کس طرح سے ماحول خراب کر نے کی کوشش کی تھی ، ممبئی اور ریاستی انٹجلیس ایجنسیوں نے بند کے دوران جو پیغامات عام کئے گئے تھے اس کا باریکی سے جائزہ لینا بھی شروع کیا گیا ہے۔ نبی اقدس کی شان میں گستاخانہ کلمات اور وسیم رضوی کی ملعونیت کے خلاف مسلمانوں میں پہلے ہی غصہ تھا اس بند کے دوران ان کے جذبات ابھر گئے اور اس کے فائدہ شرپسند عناصر نے اٹھایا ہے ۔

    پولیس ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق بند میں پرامن حالات تھے لیکن اس میں تشدد نشہ خوروں اور ہلڑ بازوں اور اوباش نوجوانوں نے تشدد برپا کیا اس کے علاوہ امرائوتی میں بھی سیاسی اور ذاتی رنجش بھی بند کے بہانے نکالی گئی اور یہی وجہ ہے کہ امرائوتی اس میں سب سے زیادہ متاثر ہوا بی جے پی نے دوسرے روز بند کا سیاسی فائدہ حاصل کرنے کےلئے مسلمانوں کی بستیوں میں گھس کر دکانوں اور ان کی املاک کو نقصان پہنچایا یہ بند انتہائی پرامن شام تک تھا لیکن شام میں اس میں تشدد اچانک برپا ہونا بھی سازش کا نتیجہ ہے اس قسم کا اندازہ انٹلیجنس ایجنسیوں نے لگایا ہے ممبئی میں سائبر سیل باقاعدگی سے ایسے مشتعل متنازع اور قابل اعتراض مشمولات کو حذف کر رہا ہے جس سے فرقہ وارانہ تشدد پھوٹ پڑنے کا خطرہ لاحق ہے اس کے ساتھ ہی سائبر سیل نے کئی ایسی ویب سائٹ اور مشمولات کو بلاک بھی کر دیا ہے جو فساد یا تشدد برپا کر نے کا سبب بن سکتی ہے اشتعال انگیزوں پر بھی نگرانی رکھی جارہی ہے پولیس بھی الرٹ ہے ۔رضا اکیڈمی نے تو صرف ممبئی بند کا اعلان کیا تھا اس کی حمایت تمام مسلم جماعتوں اور تنظیموں نے کی تھی جس کا نتیجہ یہ ہوا کہ اس نے تحریکی شکل اختیار کر لی اور پھر ریاست ہی نہیں بلکہ ملک بھر میں بندکامیاب رہا اور مہاراشٹر کے چار اضلاع تشدد کا شکار ہوکر رہ گئے ہیں اس نقطہ پر انٹلیجنس ایجنسیاں باریکی سے جانچ کر رہی ہے۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: