உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پے کمیشن کی سفارشات نافذ ہونے پر بڑھ سکتی ہے مہنگائی: آر بی آئی

    ممبئی۔  ریزرو بینک نے آج کہا کہ خردہ مہنگائی اب تک ریزرو بینک کے تخمینہ کے مطابق رہی ہے، لیکن ساتویں پے کمیشن کی سفارشات نافذ ہونے سے اس میں اضافہ ہوسکتا ہے۔

    ممبئی۔ ریزرو بینک نے آج کہا کہ خردہ مہنگائی اب تک ریزرو بینک کے تخمینہ کے مطابق رہی ہے، لیکن ساتویں پے کمیشن کی سفارشات نافذ ہونے سے اس میں اضافہ ہوسکتا ہے۔

    ممبئی۔ ریزرو بینک نے آج کہا کہ خردہ مہنگائی اب تک ریزرو بینک کے تخمینہ کے مطابق رہی ہے، لیکن ساتویں پے کمیشن کی سفارشات نافذ ہونے سے اس میں اضافہ ہوسکتا ہے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:

      ممبئی۔  ریزرو بینک نے آج کہا کہ خردہ مہنگائی اب تک ریزرو بینک کے تخمینہ کے مطابق رہی ہے، لیکن ساتویں پے کمیشن کی سفارشات نافذ ہونے سے اس میں اضافہ ہوسکتا ہے۔ مسٹر راجن نے آج یہاں رواں مالی سال کے چھٹے اور آخری مالیاتی پالیسی کا جائزہ جاری کرتے ہوئے کہا ’افراط زر کی شرح مالیاتی پالیسی کے پہلے کے تخمینوں کے مطابق رہی ہے۔ جنوری 2016 کے چھ فیصد کا ہدف حاصل ہو جانا چاہیے۔اگر اس سال مانسون معمول کے مطابق رہا اور بین الاقوامی بازار میں خام تیل اور زر مبادلہ کی شرح کی یہی صورت حال رہی تو مالی سال 17۔2016 کے آخر تک خردہ مہنگائی پانچ فیصد کی حد کے اندر اندر رکھنے کا ہدف بھی حاصل ہو جانا چاہیے‘۔


      مسٹر راجن نے کہا ’تاہم، ساتویں پے کمیشن کی سفارشات نافذ کرنے سے اس میں ایک یا دو سال کے لئے اضافہ ہو سکتا ہے کیونکہ موجودہ تخمینہ میں اس کا شمار نہیں کیا گیاہے‘۔ انہوں نے کہا کہ جب سفارشات نافذ کرنے کے وقت کے بارے میں صورت حال واضح ہو گی، مرکزی بینک مہنگائی کے اپنے تخمینہ میں سدھار کرے گا۔ انہوں نے کہا کہ ساتھ ہی اگر مانسون معمول کے مطابق نہیں رہتا ہے یا عالمی سطح پر ارضیاتی سیاسی حالات تبدیل کرنے سے اجناس کی قیمتوں میں تبدیلی ہوتی ہے تو اس سے بھی مہنگائی کی شرح اندازے سے مختلف رہ سکتی تھی۔ آر بی آئی گورنر نے کہا کہ حالانکہ دسمبر میں مسلسل پانچویں ماہ مہنگائی میں اضافہ ہوا ہے، لیکن پھل اور سبزیوں کی قیمتوں میں موسمیاتی گراوٹ آنے والے وقت میں مہنگائی میں تھوڑی راحت مل سکتی ہے۔

      First published: