உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    کرناٹک میں بی جے پی کو فوقیت دے کرگورنرنےغلطی کی ہے: شیوسینا

    شیو سینا نے کہا کہ گورنر وجو بھائی والا نے بی جے پی کو 15 دنوں کی مہلت دے کرغلط فیصلہ کیا تھا، اس کو سپریم کورٹ نے ثابت بھی کردیا۔

    شیو سینا نے کہا کہ گورنر وجو بھائی والا نے بی جے پی کو 15 دنوں کی مہلت دے کرغلط فیصلہ کیا تھا، اس کو سپریم کورٹ نے ثابت بھی کردیا۔

    شیو سینا نے کہا کہ گورنر وجو بھائی والا نے بی جے پی کو 15 دنوں کی مہلت دے کرغلط فیصلہ کیا تھا، اس کو سپریم کورٹ نے ثابت بھی کردیا۔

    • Share this:
      ممبئی: ملک کی سپریم کورٹ نے کرناٹک میں بی جے پی وزیراعلیٰ بی ایس یدیورپا کو اکثریت ثابت کرنے کے لیے 15دن دینے کے گورنر وجو بھائی والا کے فیصلہ کو کالعدم قراردے دیا جس سے ثابت ہوتا ہے کہ گورنر نے بھگوا پارٹی کی حمایت کی اورانہوں نے فیصلہ لینے میں غلطی کی ہے ،اس کا اظہار شیوسینا نے کیا ہے۔
      شیوسینا نے کہا کہ کرناٹک میں دوتین روز میں جو حالات پیدا ہوئے ،اس سے یہ بات ثابت ہوئی ہے کہ بی جے پی نے اس دوران ’’دولت اور طاقت ‘‘ کا بے جا استعمال کرنے کی کوشش کی ہے۔ تاکہ کانگریس اور جے ڈی ایس کے ایم ایل اے کو خریدا جاسکے۔

      دریں اثنا مہاراشٹر میں اپوزیشن پارٹیوں کانگریس ،این سی پی اور سماج وادی پارٹی نے سنیچر کو کرناٹک کی سیاسی صورتحال پر مسرت کا اظہار کیا ہے۔جس کی وجہ سے جمہوریت کی جیت ہوئی ہے۔


      دراصل شیو سینا نے کل بھی بی جے پی پر تنقید کرتے ہوئے اس پورے معاملے کی مخالفت کی تھی۔ شیو سینا نے یہ بھی کہا تھا کہ الیکشن کیوں کراتے ہو، سیدھا دہلی سے ہی وزیراعلیی بھیج دیا کرو۔
      First published: