ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

گوگل پر بےدرد موت سرچ کرتے تھے سشانت، ریا کے کھاتوں میں نہیں گئے پیسے۔ ممبئی پولیس

ممبئی پولیس کو جانچ میں پتہ چلا ہے کہ سشانت خودکشی سے پہلے گوگل پر بے درد موت کے بارے میں سرچ کیا کرتے تھے۔

  • Share this:
گوگل پر بےدرد موت سرچ کرتے تھے سشانت، ریا کے کھاتوں میں نہیں گئے پیسے۔ ممبئی پولیس
پولیس کمشنر نے اس کیس کی جانچ سے جڑی جانکاری دیتے ہوئے کئی چونکانے والے سوال کئے ہیں۔

ممبئی۔ بالی ووڈ اداکار سشانت سنگھ راجپوت (Sushant Singh Rajput) کی خودکشی کی جانچ کو لے کر ممبئی پولیس سوالوں کے گھیرے میں ہے۔ ہائی پروفائل اس کیس میں اب ممبئی پولیس اور بہار پولیس آمنے سامنے آ گئی ہیں۔ خودکشی اور قتل کے درمیان گھرے اس معاملہ میں ہر دن اب نئے نئے حقائق سامنے آنے لگے ہیں۔ ممبئی اور بہار پولیس میں چل رہے ٹکراو کے بیچ ممبئی کے پولیس کمشنر پربیر سنگھ نے میڈیا سے بات کی ہے۔ پولیس کمشنر نے اس کیس کی جانچ سے جڑی جانکاری دیتے ہوئے کئی چونکانے والے سوال کئے ہیں۔ ممبئی پولیس کو جانچ میں پتہ چلا ہے کہ سشانت خودکشی سے پہلے گوگل پر بے درد موت کے بارے میں سرچ کیا کرتے تھے۔


سشانت سنگھ راجپوت کی خودکشی کی جانچ سے متعلق معلومات دیتے ہوئے ممبئی پولیس کمشنر نے بتایا کہ چودہ جون کو پولیس کو سشانت کی خودکشی کی اطلاع ملی تھی۔ پولیس جب سشانت کے فلیٹ میں پہنچی تب باڈی پلنگ پر تھی۔ اس وقت وہاں پر جتنے لوگ تھے ان کا بیان لیا گیا اور پنچ نامہ کیا گیا۔ فلیٹ کا تالا توڑنے والے کا بھی بیان لیا گیا۔ خودکشی کے اس معاملے میں پندرہ جون کو فارنسک ٹیم نے جانچ کی۔ اس دوران 56 لوگوں سے پوچھ گچھ کی گئی۔ معاملے کی سنگینی کو دیکھتے ہوئے مالی لین دین کی بھی جانچ کی گئی۔ ابھی بھی سبھی نکات کو دھیان میں رکھتے ہوئے جانچ چل رہی ہے۔



پولیس کمشنر نے بتایا کہ جانچ کے دوران سولہ جون کو سشانت کے اہل خانہ کا بیان درج کیا گیا تھا۔ اس وقت کسی کو بھی کوئی شک نہیں تھا۔ سشانت کے والد نے پولیس کو جو بیان دیا تھا وہ ہمارے پاس ابھی بھی موجود ہے۔ پربیر سنگھ نے بتایا کہ یہ سارے بیان سشانت کے بہنوئی اوپی سنگھ کے سامنے درج کئے گئے ہیں۔ یہاں تک کہ سبھی بیان پر سبھی کے دستخط ہیں۔ معاملہ کی جانچ کے دوران تیرہ اور چودہ جون کا سی سی ٹی وی ہم نے دیکھا ہے۔ کسی پارٹی کے بارے میں ہمیں کوئی جانکاری نہیں ملی ہے۔
Published by: Nadeem Ahmad
First published: Aug 03, 2020 03:48 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading