உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    حکومت تلنگانہ کے بیک ورڈ کمیشن کے قیام کے اعلان کے ساتھ 12 فیصد مسلم ریزرویشن کی امیدیں بڑھیں

    حکومت تلنگانہ کےذریعہ بیک ورڈ کمیشن کے قیام کا اعلان کئے جانے کے ساتھ ہی تلنگانہ میں 12 فیصد مسلم ریزرویشن ملنے کی امیدیں بڑھ گئی ہیں ۔ ریاستی کابینہ کے بی سی کمیشن کے قیام کے فیصلہ کے ساتھ ہی اب مسلمانوں کو انتظار ہے کہ کمیشن کے اغراض و مقاصد میں مسلم ریزرویشن کو کتنی اہمیت دی جائے گی۔

    حکومت تلنگانہ کےذریعہ بیک ورڈ کمیشن کے قیام کا اعلان کئے جانے کے ساتھ ہی تلنگانہ میں 12 فیصد مسلم ریزرویشن ملنے کی امیدیں بڑھ گئی ہیں ۔ ریاستی کابینہ کے بی سی کمیشن کے قیام کے فیصلہ کے ساتھ ہی اب مسلمانوں کو انتظار ہے کہ کمیشن کے اغراض و مقاصد میں مسلم ریزرویشن کو کتنی اہمیت دی جائے گی۔

    حکومت تلنگانہ کےذریعہ بیک ورڈ کمیشن کے قیام کا اعلان کئے جانے کے ساتھ ہی تلنگانہ میں 12 فیصد مسلم ریزرویشن ملنے کی امیدیں بڑھ گئی ہیں ۔ ریاستی کابینہ کے بی سی کمیشن کے قیام کے فیصلہ کے ساتھ ہی اب مسلمانوں کو انتظار ہے کہ کمیشن کے اغراض و مقاصد میں مسلم ریزرویشن کو کتنی اہمیت دی جائے گی۔

    • ETV
    • Last Updated :
    • Share this:
      حیدرآباد : حکومت تلنگانہ کےذریعہ بیک ورڈ کمیشن کے قیام کا اعلان کئے جانے کے ساتھ ہی تلنگانہ میں 12 فیصد مسلم ریزرویشن ملنے کی امیدیں بڑھ گئی ہیں ۔ ریاستی کابینہ کے بی سی کمیشن کے قیام کے فیصلہ کے ساتھ ہی اب مسلمانوں کو انتظار ہے کہ کمیشن کے اغراض و مقاصد میں مسلم ریزرویشن کو کتنی اہمیت دی جائے گی۔ کمیشن کب با ضابطہ اپنے کام کا آغاز کرے گا اور کب بارہ فیصد ریزرویشن کے وعدہ کی تکمیل ہو گی ۔
      خیال رہے کہ بر سر اقتدار تلنگانہ راشٹریہ سمیتی نے الیکشن سے قبل مسلمانوں سے بارہ فیصد ریزرویشن کا وعدہ کیا تھا ۔ اسمبلی انتخابات میں واضح اکثریت سے کامیابی کے بعد ریاست کے مسلمانوں کو یہ امید تھی وعدہ کے مطابق بیک ورڈ کلاس کمیشن کے قیام کے ذریعے بارہ فیصد مسلم ریزرویشن کی راہ ہموار کی جائے گی ، لیکن ریاستی حکومت نے بی سی کمیشن کے قیام کی بجاے ایک ریٹائرڈ آئی اے ایس افسر جی سدھیر کی قیادت میں مارچ 2015 میں کمیٹی آف انکوئری قائم کردی ، جس کا مقصد ریاست کے مسلمانوں کی سماجی، معاشی اور تعلیمی حالت کا جائزہ لینے بعد حکومت کو رپورٹ پیش کرنا تھا ۔
      سدھیر کمیٹی نے دو ماہ قبل وزیر اعلی چندرا شیکھر راؤ کو اپنی رپورٹ پیش کر دی ۔ 07 اکتوبر کوریاستی کابینہ میں بیک ورڈ کلاس کمیشن کے قیام کا فیصلہ کیا گیا ۔ ادھر تلنگانہ میں بی سی کمیشن کے قیام کے فیصلہ اور اس کے ذریعہ بارہ فیصد ریزرویشن کی فراہمی پر اپوزیشن کانگریس نے خدشات کا اظہار کیا ہے۔
      First published: