ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

مہاراشٹر: ادھو حکومت نے سابق وزیر اعلیٰ دیویندر فڑنویس کی سیکورٹی میں تخفیف کردی، بلیٹ پروف گاڑی بھی واپس لی گئی

دیویندر فڑنویس کے علاوہ ریاست میں کئی اور اپوزیشن لیڈروں کی سیکورٹی کم کی گئی ہے۔ بی جے پی نے ریاستی حکومت کے فیصلے پر سخت اعتراض ظاہر کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ بدلے کی کارروائی ہے۔

  • Share this:
مہاراشٹر: ادھو حکومت نے سابق وزیر اعلیٰ دیویندر فڑنویس کی سیکورٹی میں تخفیف کردی، بلیٹ پروف گاڑی بھی واپس لی گئی
ادھو حکومت نے سابق وزیر اعلیٰ دیویندر فڑنویس کی سیکورٹی میں تخفیف کردی، بلیٹ پروف گاڑی بھی واپس لی گئی۔

ممبئ: مہاراشٹر میں ادھو ٹھاکرے (Uddhav Thackeray) کی قیادت والی مہا وکاس اگھاڑی حکومت نے آج یہاں ریاست کے اپوزیشن لیڑران کے حفاظتی انتظامات میں تخفیف کردی ہے، جس میں سابق وزیر اعلی اور اپوزیشن لیڑر دیوندر فڑنویس (Devendra Fadnavis) مہاراشٹر نو نرمان سینا کے صدر راج ٹھاکرے اور بی جے پی ریاستی صدر چندرکانت پاٹل کا نام شامل ہیں۔ گزشتہ کل ریاستی وزارت داخلہ اور پولیس کے اعلی عہد دارن کا اجلاس منعقد ہوا تھا، جس میں سیاسی لیڈروں اور اہم شخصیات کو حاصل سیکورٹی کا جائزہ لیا گیا تھا، جس کے بعد کے لئے مذکورہ رہنماوں کی سیکورٹی کو کم کردیا گیا۔ یاد رہے کہ دیویندر فڑنویس اور چندر کانت پاٹل کا شمار مہاراشٹر کے ان لیڈران میں ہوتا ہے، جو شیوسینا، کانگریس اور این سی پی پر مشتمل حکمراں اتحاد مہا وکاس اگھاڑی حکومت پر تنقید کرتے ہیں اور کارکردگی کو لے کر انہں تنقید کا نشانہ بناتے ہیں۔


مہاراشٹر کی ادھو ٹھاکرے حکومت نے سابق وزیر اعلیٰ دیویندر فڑنویس سمیت مختلف اپوزیشن لیڈروں کی سیکورٹی میں تخفیف کردی ہے۔ ساتھ ہی دیویندر فڑنویس کی بلیٹ پروف گاڑی بھی واپس لے لی گئی ہے، جس سے بی جے پی نے ادھو حکومت پر سخت تنقید کی ہے۔
مہاراشٹر کی ادھو ٹھاکرے حکومت نے سابق وزیر اعلیٰ دیویندر فڑنویس سمیت مختلف اپوزیشن لیڈروں کی سیکورٹی میں تخفیف کردی ہے۔ ساتھ ہی دیویندر فڑنویس کی بلیٹ پروف گاڑی بھی واپس لے لی گئی ہے، جس سے بی جے پی نے ادھو حکومت پر سخت تنقید کی ہے۔


بی جے پی نے کہی یہ بات


دیویندر فڑنویس کے علاوہ ریاست میں کئی اور اپوزیشن لیڈروں کی سیکورٹی کم کی گئی ہے۔ بی جے پی نے ریاستی حکومت کے فیصلے پر سخت اعتراض ظاہر کرتے ہوئے ادھو حکومت کی تنقید کی ہے۔ بی جے پی کے چیف ترجمان کیشو اپادھیائے نے فیصلے کو لے کر ادھو ٹھاکرے حکومت پر نشانہ سادھا ہے۔ انہوں نے اسے بدلے کی کارروائی قرار دیا ہے۔



بلیٹ پروف گاڑی کو بھی ہٹایا جائے گا

قانون ساز کونسل میں اپوزیشن لیڈر پروین دریکر اور بی جے پی رکن اسمبلی پرساد لاڈ کی بھی سیکورٹی کم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ راج ٹھاکرے کے پاس زیڈ کلاس کی سیکورٹی ہے، لیکن اب انہیں اس کے بدلے وائی پلس سیکورٹی دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ حکومت کے ذریعہ لئے گئے فیصلے کے مطابق، دیویندر فڑنویس کے قافلے کے بلیٹ پروف گاڑی کو بھی ہٹایا جائے گا۔



وہیں سیکورٹی ہٹائے جانے کے بعد بی جے پی لیڈر سدھیر منگٹی وار نے ٹوئٹ کیا، ’حکومت کا شکریہ... آپ نے ہماری سیکورٹی واپس لی۔ نکسل متاثرہ ضلع ہونے کے سبب مجھے سیکورٹی دی گئی تھی، لیکن آج نسل واد ختم ہوتا ہوا دکھائی دے رہا ہے۔ ہماری سیکورٹی ہٹائی گئی۔ پھر بھی عوام کے مفاد کے تئیں سیکورٹی کے لئے ہماری آواز مزید تیز ہوگی۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Jan 10, 2021 05:15 PM IST