ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

شہریت ترمیمی قانون پر مختار عباس نقوی نے کہا : ملک میں کچھ لوگ عوام کو گمراہ کر رہے ہیں

مرکزی وزیر مختار عباس نقوی نے کہا کہ ملک میں 130 کروڑ ہندوستانی بستے ہیں ، ملک میں مسلمان مجبوری سے نہیں ، بلکہ مضبوطی سے مقیم ہیں ۔

  • Share this:
شہریت ترمیمی قانون پر مختار عباس نقوی نے کہا : ملک میں کچھ لوگ عوام کو گمراہ کر رہے ہیں
شہریت ترمیمی قانون پر مختار عباس نقوی نے کہا : ملک میں کچھ لوگ عوام کو گمراہ کر رہے ہیں

ممبئی : مرکزی وزیر برائے اقلیتی امور مختار عباس نقوی نے شہریت ترمیمی قانون اور دفعہ 370 پر وزیر اعظم نریندر مودی کے بیان کی مکمل حمایت کی ۔ مختار عباس نقوی نے کہا کہ شہریت ترمیمی قانون کسی ہندوستانی شہری کے خلاف نہیں ہے۔ کچھ سیاسی لوگ عوام کو گمراہ کر رہے ہیں اس سے ملک میں بدگمانیاں پیدا ہوئی ہیں ، جس کا ازالہ بھی ضروری ہے لیکن یہ کہنا درست نہیں ہے کہ ملک کا مسلمان محفوظ نہیں ہے۔


مرکزی وزیر مختار عباس نقوی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مزید کہا کہ ملک میں 130 کروڑ ہندوستانی بستے ہیں ، ملک میں مسلمان مجبوری سے نہیں ، بلکہ مضبوطی سے مقیم ہیں ۔ انہیں مذہب کی آزادی کے ساتھ زندگی گزارنے کا حق حاصل ہے ۔ کچھ لوگ ایسے حالات میں سیاست کر کے لوگوں کو گمراہ کر رہے ہیں۔


مرکزی وزیر نے کہا کہ جو لوگ شہریت ترمیمی قانون اور این آر سی کے خلاف احتجاج کر رہے ہیں ، وہ ایک مخصوص سیاسی نظریات کے تحت احتجاج کے ذریعہ مخالفت کر رہے ہیں ۔ حکومت انہیں اس لئے نہیں روک رہی ہے ، کیونکہ یہ ان احتجاجیوں کا جمہوری حق ہے ۔ مختار عباس نقوی نے کہا کہ سی اے اے اور این آر سی کے متعلق حکومت کا معاملہ واضح ہے ۔ ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے مختار عباس نقوی نے کہا کہ احتجاجیوں سے بات چیت کرنے کی کوشیش اس سے قبل بھی کی گئی ہیں ۔

First published: Feb 17, 2020 08:28 PM IST