உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    کیا ہے پاپولر فرنٹ آف انڈیا(پی ایف آئی)، کیسے ڈالی گئی اس کی بنیاد؟ جانیے مکمل تفصیل

    کیا ہے پاپولر فرنٹ آف انڈیا(پی ایف آئی)، کیسے ڈالی گئی اس کی بنیاد؟ جانیے مکمل تفصیل

    کیا ہے پاپولر فرنٹ آف انڈیا(پی ایف آئی)، کیسے ڈالی گئی اس کی بنیاد؟ جانیے مکمل تفصیل

    What Is PFI؟ پی ایف آئی ایک سخت گیر تنظیم ہے۔ 2017 میں این آئی اے نے وزارت داخلہ کو خط لکھ کر اس تنظیم پر پابندی لگانے کی مانگ کی تھی۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Kerala | Tamil Nadu | Bangalore [Bangalore]
    • Share this:
      What Is PFI؟ ٹیرر فنڈنگ و دیگر غیر قانونی سرگرمیوں میں شامل پائے جانے کے بعد اسلامی تنظیم پاپولر فرنٹ آف انڈیا (PFI) پر پانچ سال کی پابندی لگادی گئی ہے۔ وزارت داخلہ کی جانب سے س کے لئے نوٹیفکیشن بھی جاری کردیا گیا ہے۔ بتادیں کہ حال ہی میں NIA اور تمام ریاستوں کی ایجنسیوں نے پی ایف آئی کے کئی ٹھکانوں پر چھاپہ ماری کرتے ہوئے 250 سے زیادہ ارکان کو حراست میں لیا تھا۔ آئیے تفصیل سے جانتے ہیں کہ آخر پی ایف آئی ہے کیا؟ کس طرح سے کام کرتا ہے؟ اس پر پابندی کیوں لگائی گئی؟

      پی ایف آئی ہے کیا؟
      پاپولر فرنٹ آف انڈیا یعنی پی ایف آئی کی تشکیل 17 فروری 2007 کو ہوئی تھی۔ یہ تنظیم جنوبی ہند کے تین مسلم جماعتوں کو ضم کرکے بنی تھی۔ ان میں کیرل کی نیشنل ڈیموکریٹک فرنٹ، کرناٹک فورم فار ڈگنیٹی اور تمل ناڈو کا منیتھا نیتی پسرائی شامل تھے۔ پی ایف آئی کا دعویٰ ہے کہ اس وقت ملک کے 23 ریاستوں میں یہ تنظیم سرگرم ہے۔ ملک میں اسٹوڈنٹس اسلامک موومنٹ یعنی سیمی پر بین لگنے کے بعد پی ایف آئی کی توسیع تیزی سے ہوئی ہے۔ کرناٹک، کیرل جیسے جنوبی ہند کی ریاسوں میں اس تنظیم کی پکڑ کافی مضبوط بتائی جاتی ہے۔ اس کی کئی برانچس بھی ہیں۔ تشکیل کے بعد سے ہی پی ایف آئی پر سماج مخالف اور ملک مخالف سرگرمیاں انجام دینے کے الزام لگتے رہتے ہیں۔

      PFI کو کہاں سے ملتا ہے فنڈ؟
      گزشتہ سال فروری میں انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ (ED) نے پی ایف آئی اور اس کی اسٹوڈنٹ وِنگ کیمپس فرنٹ آف انڈیا (CFI) کے پانچ ارکان کے خلاف منی لانڈرنگ کے معاملے میں چارج شیٹ دائر کی تھی۔ ای ڈی کی جانچ میں پتہ چلا تھا کہ پی ایف آئی کا نیشنل جنرل سکریٹری کے اے روف گلف ممالک میں بزنس ڈیل کی آڑ میں پی ایف آئی کے لئے فنڈ اکٹھا کرتا تھا۔ یہ پیسے الگ الگ ذریعے سے پی ایف آئی اور سی ایف آئی سے جڑے لوگوں تک پہنچائے گئے۔ جانچ ایجنسیوں کے مطابق قریب 1.36 کروڑ روپے کی رقم مجرمانہ طریقوں سے حاصل کی گئی۔

      اس تنظیم پر کیا ہے الزامات؟
      پی ایف آئی ایک سخت گیر تنظیم ہے۔ 2017 میں این آئی اے نے وزارت داخلہ کو خط لکھ کر اس تنظیم پر پابندی لگانے کی مانگ کی تھی۔ این آئی اے جانچ میں اس تنظیم کے مبینہ طور پر پرتشدد اور دہشت گردانہ سرگرمیوں میں ملوث ہونے کی بات آئی تھی۔ این آئی اے کے ڈوزئیر کے مطابق یہ تنظیم قومی سلامتی کے لئے خطرہ ہے۔ یہ تنظیم مسلمانوں پر مذہبی کٹرواد تھوپنے اور زبردستی تبدیلی مذہب کرانے کا کام کرتی ہے۔ این آئی اے نے پی ایف آئی پر ہتھیار چلانے کے لئے ٹریننگ کیمپ چلانے کا الزام لگایا ہے۔ اتنا ہی نہیں یہ تنظیم نوجوانوں کو کٹر بناکر دہشت گردانہ سرگرمیوں میں شامل ہونے کے لئے بھی اُکساتی ہے۔

      یہ بھی پڑھیں:
      ملک کی 7 ریاستوں میں PFI کےخلاف دوبارہ کارروائی، 270 افرادزیرحراست، فسادات کیلئےاکسانے...

      یہ بھی پڑھیں:
      مدھیہ پردیش حکومت سے مولانا برکت اللہ بھوپالی کی خدمات کو نصاب کا حصہ بنانے کا مطالبہ

      پی ایم مودی بھی تھے ٹارگیٹ پر
      انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ (ای ڈی) نے پاپولر فرنٹ آف انڈیا (پی ایف آئی) کے حوالے سے ایک اور سنسنی خیز انکشاف کیا ہے۔ حکام نے دعویٰ کیا ہے کہ پی ایف آئی نے اس سال جولائی میں بہار کی راجدھانی پٹنہ میں وزیر اعظم نریندر مودی پر حملہ کرنے کا خطرناک منصوبہ بنایا تھا۔ اس کے لیے تنظیم نے پٹنہ میں ایک تربیتی کیمپ کا انعقاد بھی کیا تھا اور کئی اراکین کو تربیت دینے کا کام بھی کیا تھا۔ یہی نہیں، بہت سے لوگ فنانسنگ کے لیے بیرونی طاقتوں سے رابطے میں تھے۔ پی ایم مودی کی ہر سرگرمی پر نظر رکھی جا رہی تھی۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق نہ صرف پی ایم مودی پر حملے بلکہ پی ایف آئی دیگر حملوں کے لیے بھی دہشت گردی کے ماڈیول تیار کر رہی تھی۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: