உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    WhatsApp پر آرہے ہیں تین زبردست فیچرس! ویڈیو کرسکیں گے ایڈٹ

    WhatsApp پر آرہے ہیں نئے بہترین فیچرس۔

    WhatsApp پر آرہے ہیں نئے بہترین فیچرس۔

    رپورٹ کے مطابق، کمپنی اس میسیج ری ایکشن پر کافی دنوں سے کام کررہی ہے، جس سے یوزرس کو میسیج پر ری ایکٹ کرنے کی اجازت ملے گی۔ یہ بالکل اُسی طرح کام کرے گا، جیسے کہ فیس بک میسینجر یا انسٹاگرام پر یوزرس کرتے آئے ہیں۔

    • Share this:
      واٹس ایپ (WhatsApp) اپنے یوزرس کے تجربے کو بہتر بنانے کے لئے کئی نئے فیچرس پر کام کررہا ہے، جس میں کیمرہ سیٹنگ کو بہتر کرنا، وائس نوٹ بیک گراونڈ میں پلے کرنا شامل ہے۔ اب کمپنی نئے اپ ڈیٹ میں ڈرائنگ ٹول لا رہی ہے۔ اس میں نئی پینسل آئیکان ملے گا، جس سے امیج اور ویڈیو کو فارورڈ کرنے سے پہلے اُس میں کچھ تبدیلی یا لکھا جاسکے گا۔ ویسے تو واٹس ایپ میں پہلے سے ہی ایک پینسل فیچر موجود ہے، لیکن نیا اپ ڈیٹ آنے کے بعد یوزرس کو موٹی اور باریک پینسل ملے گی، جس سے ڈرائنگ کرنے کا تجربہ بدل جائے گا۔

      اس کے علاوہ آنے والے وقت میں بلر امیج ٹول بھی ملے گا۔ یہ فیچر واٹس ایپ بیٹا اینڈرائیڈ 2.22.3.5 اپ ڈیٹ میں دیکھا گیا ہے، لیکن بائے ڈیفالٹ ڈیزیبل تھا۔ فیچر ابھی بھی ڈیولپمنٹ اسٹیج پر ہے، اور جلد ہی اسے بیٹا ٹیسٹرس کے لئے پیش کیا جاسکتا ہے۔

      اس کے علاوہ واٹس ایپ کے ڈیسک ٹاپ یوزرس کو نیا چیٹ ببل کلر ملے گا، جس سے ڈارک موڈ استعمال کرتے وقت یوزرس کو نیا ڈارک بلو کلر ملے گا۔ یہ اپ ڈیٹ ونڈوز اور میک OS ایپس کے لئے آئے گا، جو کہ واٹس ایپ بیٹا ڈیسک ٹاپ 2.2201.2.0 اپ ڈیٹ میں چیٹ ببل گرین کر دے گا۔ چیٹ بار اور بیک گراونڈ کا کلر بھی چینج ہوجائے گا۔

      ملے گا نوٹیفکیشن مینیج آپشن
      دوسرے اپ ڈیٹ مین واٹس ایپ کے iOS یوزرس کے لئے نوٹیفکیشن سیٹنگ کو مینیج کرنے کا آپشن بھی ملے گا، جس سے وہ سیٹ کر پائیں گے کہ کس چیٹ یا گروپ چیٹ کا نوٹیفکیشن پانا ہے، اور نوٹیفکیشن ساونڈ کو مینیج بھی کیا جاسکے گا۔ساتھ ہی واٹس ایپ پر میسیج ری ایکشن ٹیب بھی ملے گا، جس میں یوزرس دیکھ پائیں گے کہ کس میسیج پر کس نے ری ایکٹ کیا ہے۔

      رپورٹ کے مطابق، کمپنی اس میسیج ری ایکشن پر کافی دنوں سے کام کررہی ہے، جس سے یوزرس کو میسیج پر ری ایکٹ کرنے کی اجازت ملے گی۔ یہ بالکل اُسی طرح کام کرے گا، جیسے کہ فیس بک میسینجر یا انسٹاگرام پر یوزرس کرتے آئے ہیں۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: