شوہرنے بیوی کےبیڈ روم میں لگوا دیئےکیمرے، خواتین کمیشن میں شکایت کے بعد کہی یہ حیران کن بات

مغربی تریپورہ ضلع کے سادھوتلا گاوں کے ایک شخص نےاپنی بیوی کےکمرے میں سی سی ٹی وی کیمرے لگوا دیئے۔ بیوی نےاس کولےکرریاست کے خواتین کمیشن میں شکایت کی ہے۔

Jul 19, 2019 11:24 PM IST | Updated on: Jul 20, 2019 12:01 AM IST
شوہرنے بیوی کےبیڈ روم میں لگوا دیئےکیمرے، خواتین کمیشن میں شکایت کے بعد کہی یہ حیران کن بات

شوہرنےبیوی کے روم میں لگوا دیئے سی سی سی ٹی کیمرے۔

تریپورہ سےایک حیران کرنے والا معاملہ سامنے آیا ہے۔ مغربی تریپورہ ضلع کے سادھوتلا گاوں کے ایک شخص نےاپنی بیوی کےکمرے میں سی سی ٹی وی کیمرے لگوا دیئے۔ بیوی نےاس کولےکرریاست کے خواتین کمیشن میں شکایت کی ہے۔ شوہرنے اپنی صفائی میں کہا کہ اس نے اپنے دفاع کے لئے یہ کیمرے لگوائے ہیں۔ آپ کوبتادیں کہ یہ جوڑا فی الحال الگ رہ رہا ہے۔

تین سالہ پہلے 47 سالہ کانتی دھرپہلے 38 سالہ رتنا پودار سے شادی ہوئی تھی۔ شادی کے کچھ وقت بعد ہی کانتی دھربیوی سے جہیز کا مطالبہ کرنے لگا۔ بقول رتنا، شادی کے وقت چندن کےاہل خانہ نے جہیزکا مطالبہ نہیں کیا تھا، لیکن شادی کے کچھ وقت بعد ہی ساس سسر نےجہیزکےلئے پریشان کرنا شروع کردیا۔ ساس، دیوراورپڑوسیوں نے جسمانی اور ذہنی طورسے پریشان کیا۔ رتنا کا الزام ہے کہ قدیم زمین بیچ کرمیرے گھروالوں نے دولاکھ روپئے جہیزکے طورپردیئے، لیکن استحصال جاری رہا۔

Loading...

اس درمیان رتنا کوشک ہوا کہ اس کے شوہرکا اس کی ایک رشتہ دارسے ایکسٹرا میریٹل افیئرہے۔ حالات اس وقت بگڑگئے جب رتنا نے گزشتہ ستمبرمیں اس کے چارکمرے کے گھرمیں سی سی ٹی وی کیمرے لگوا دیئے۔ دسمبرسے رتنا اپنی ماں کے ساتھ رہ رہی ہے۔ رتنا نے بتایا کہ گھرمیں ہرجگہ کیمرے لگے ہیں۔ مین گیٹ، کوریڈور، ساس کے کمرے اورہمارے بیڈ روم اورایک دیگرکمرے میں کیمرے لگے ہیں۔ مونیٹرساس کے کمرے میں لگا ہے۔ یہ انفرادی زندگی کی سنگین خلاف ورزی ہے۔ میں خاتون ہوں اورہرجگہ سی سی ٹی وی کیمروں کی ریکارڈنگ یہاں تک کہ پرائیویٹ اسپیس میں بھی، بہت پریشان کرنے والی بات ہے۔

پریشان رتنا نے اس ماہ تریپورہ کی خواتین کمیشن سے مدد کی گہارلگائی۔ دو جولائی کوکانتی دھرکےخلاف گھریلو تشدد، جہیز استحصال اوراڈلٹری کی باضابطہ شکایت درج کرائی۔ بدھ کو کاونسلنگ کے پہلے سیشن کے دوران اس نے سی سی ٹی وی کیمروں کے بارے میں شکایت کی۔ حالانکہ کانتی دھرنے سبھی الزامات کو مسترد کرتے ہوئےکہا 'میں بے قصور ہوں'۔ میں نے نہ توجہیز لیا اورنہ ہی میرے کسی کے ساتھ ناجائزتعلقات ہیں۔ مجھے اس بارے میں چرچا کرنا برا لگ رہا ہے، لیکن پوری شکایت ہم سے بدلہ لینے کے لئے کی گئی ہے کیونکہ میری بیوی جب گھرچھوڑکرجارہی تھی تواس ہمیں جیل بھجوانے کی دھمکی دی تھی۔

بقول کانتی دھر، میری بہت شک کرنے والی ہے اور میرے ماں اوررشتہ داروں کے ساتھ برا برتاو ہے۔ سیلف ڈیفنس کے لئے میں نے سی سی ٹی وی کیمرے لگوائے ہیں۔ خود کوپاک صاف ثابت کرنے کے لئے اس نے احتیاطاً  کیمرے لگوائے۔ خوایتن کمیشن کی چیئرپرسن برنالی گوسوامی نے اسے ریئر اورسیریل کرائم بتایا ہے۔ کوئی خاتون اپنے سب سے پرائیویٹ کوارٹرس میں مسلسل نگرانی میں کیسے رہ سکتی ہے؟ ہم نے بدھ کو دونوں فریقوں کو سنا اورازسرنوغورکرنے کے لئے 45 دن کا وقت دیا ہے۔ اسی درمیان کانتی دھرکوگزارا بھتہ کے لئے بیوی کو ہرماہ تین ہزار روپئے دینے کے لئے کہا گیا ہے۔

آپ کو بتادیں کہ ہندوستان میں پرائیویٹ اسپیس میں سی سی ٹی وی کیمرے لگوانا لیگل ہے، اس کےلئے کسی خصوصی لائسنس کی ضرورت نہیں رہتی۔ حالانکہ یہ بھارتی پینل کوڈ کے دفعہ 354 سی کے تحت کرمنل آفینس ہے۔ اگران کا استعمال نمائش کے لئے کیا جاتا ہے تو اس طرح کے جرائم میں ملوث شخص کو ایک سے تین سال تک کی سزا ہوسکتی ہے۔ ساتھ ہی پہلی بارجرم میں ملوث پائے جانے پرجرمانہ بھی بھرنا پڑتا ہے۔ اگرشخص دوبارہ یہ جرم کرتا ہے تواسے سات سال کی قید اورجرمانہ دونوں سزا ہوتی ہے۔ قانون میں کچھ تجویز ہے، جہاں عوامی مقامات پرکوئی سی سی ٹی وی کیمرے نہیں لگا سکتا، مثلاً پرائیویٹ، باتھ روم اوربیڈ روم۔

Loading...