ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

وزیر اعظم امپلائمنٹ پیکیج کے تحت مائیگرنٹ امیدواروں کے تحریری امتحانات جلد

کشمیری مہاجرین کے لئے وزیر اعظم امپلائمنٹ پیکیج کے تحت حال ہی میں مشتہرکی گئی تقریباً 2000 اسامیوں کے لئے لازمی تحریری امتحانات کے لئے تمام تر تیاریاں مکمل کی جارہی ہیں۔ ان اسامیوں کے لئے تقریباً 33 ہزار سے زائد امیدواروں نے مختلف عہدوں کے لئے درخواستیں دی ہیں۔

  • Share this:
وزیر اعظم امپلائمنٹ پیکیج کے تحت مائیگرنٹ امیدواروں کے تحریری امتحانات جلد
وزیر اعظم امپلائمنٹ پیکیج کے تحت مائیگرنٹ امیدواروں کے تحریری امتحانات جلد

جموں: کشمیری مہاجرین کے لئے وزیر اعظم امپلائمنٹ پیکیج کے تحت حال ہی میں مشتہرکی گئی تقریباً 2000 اسامیوں کے لئے لازمی تحریری امتحانات کے لئے تمام تر تیاریاں مکمل کی جارہی ہیں۔ ان اسامیوں کے لئے تقریباً 33 ہزار سے زائد امیدواروں نے مختلف عہدوں کے لئے درخواستیں دی ہیں۔ چیئرمین J&K services selection Board  خالد جہانگیر نے نیوز 18 کے ساتھ ایک خصوصی گفتگو میں کہا کہ مسابقتی امتحانات مارچ کے آخری ہفتے میں منعقد کئے جارہے ہیں۔


انہوں نے کہا کہ ’چونکہ شیو راتری کا تیوہار 10 مارچ کو منایا جارہا ہے، لہٰذا یہ فیصلہ لیا گیا کہ یہ امتحانات 15 مارچ 2021 کے بعد ہی منعقد کئے جائیں گے۔ ہم یہ چاہتے ہیں کہ امیدوار شیو راتری کا تیوہار منانے کے بعد ہی اس امتحان میں شامل ہوں۔ ان کا کہنا تھا کہ اس سلسلے میں جموں اور سری نگر، دونوں مقامات پر امتحانی مراکز قائم کئے جارہے ہیں۔ خالد جہانگیری نے کہا کہ چونکہ زیادہ تر امیدوار کشمیر وادی سے باہر مقیم ہیں لہٰذا 90 فی صد امتحانی مراکز جموں میں قائم کئے جائیں گے جبکہ باقی ماندہ دو فی صد امتحانی مراکز گرمائی دارالخلافہ سری نگر میں قائم کئے جائیں گے۔ یہ پوچھے جانے پرکہ اس بار سری نگر میں امتحانی مراکز کیوں قائم کئے جارہے ہیں، کے جواب میں خالد جہانگیر نے کہا کہ چونکہ اس بار نان مائیگرنٹ کشمیری پنڈتوں کو بھی اس پیکیج کے دائرے میں لایا گیا ہے، لہٰذا سری نگر میں ایسے امتحانی مراکز قائم کرنا ناگزیر بن گیا ہے۔


خالد جہانگیری نے کہا کہ چونکہ زیادہ تر امیدوار کشمیر وادی سے باہر مقیم ہیں لہٰذا 90 فی صد امتحانی مراکز جموں میں قائم کئے جائیں گے جبکہ باقی ماندہ دو فی صد امتحانی مراکز گرمائی دارالخلافہ سری نگر میں قائم کئے جائیں گے۔
خالد جہانگیری نے کہا کہ چونکہ زیادہ تر امیدوار کشمیر وادی سے باہر مقیم ہیں لہٰذا 90 فی صد امتحانی مراکز جموں میں قائم کئے جائیں گے جبکہ باقی ماندہ دو فی صد امتحانی مراکز گرمائی دارالخلافہ سری نگر میں قائم کئے جائیں گے۔


انہوں نے کہا کہ امیدواروں کو آن لائن موڈ میں امتحان دینا ہوگا۔ انہوں نے کہا اس بار کاغذ کے او ایم آر شیٹ کے بجائے امیدوار کمپیوٹر سسٹم پر آن لائن طریقے سے سوالات کا جواب دیں گے اور کمپیوٹر ایس ایس آر بی کی طرف سے ہی امتحانی مراکز میں دستیاب رکھے جائیں گے۔ خالد جہانگیر نے کہا کہ اگلے چند روز میں ان امتحانات کا شیڈول جاری کیا جائے گا۔ واضح رہے کہ مرکز میں کانگریس سرکار کے دوران سابق وزیر اعظم ڈاکٹر منموہن سنگھ نے کشمیری مائیگرنٹ وطن واپسی اور باز آبادکاری کے خصوصی پیکیج کے ایک حصے کے طور پر 6 ہزار اسامیوں پر مشتمل امپلائیمنٹ پیکیج کا اعلان کیا تھا  جن میں سے قریب چار ہزار اسامیاں پہلے ہی پُرکی گئی ہیں اور باقی ماندہ اسامیوں کو پُرکرنے کا عمل جاری ہے۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Feb 22, 2021 08:15 PM IST