ایکسکلوزیو انٹرویو: یوگی آدتیہ ناتھ نے کہا۔ قومی سلامتی کے لئے خطرہ ہیں بنگلہ دیشی درانداز

یوگی آدتیہ ناتھ نے نیوز 18 نیٹ ورک گروپ کے ایڈیٹر ان چیف راہل جوشی کے ساتھ ایکسکلوزیو انٹرویو میں کہا کہ بنگلہ دیشی دراندازوں کی شناخت کرنا بہت ہی ضروری ہے۔ اترپردیش ہی نہیں پورا ملک داخلی سلامتی کے مسئلہ سے جوجھ رہا ہے۔

Sep 19, 2019 03:54 PM IST | Updated on: Sep 19, 2019 04:50 PM IST
ایکسکلوزیو انٹرویو: یوگی آدتیہ ناتھ نے کہا۔ قومی سلامتی کے لئے خطرہ ہیں بنگلہ دیشی درانداز

یوگی آدتیہ ناتھ

اترپردیش کے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ نے کہا ہے کہ آسام میں نافذ نیشنل رجسٹر آف سٹیزن ( این آر سی) سے ہندوستان کی قومی سلامتی کو مضبوطی ملے گی۔ اسے ملک کی دیگر ریاستوں میں بھی نافذ کیا جانا چاہئے۔ انہوں نے نیوز 18 نیٹ ورک گروپ کے ایڈیٹر ان چیف راہل جوشی کے ساتھ ایکسکلوزیو انٹرویو میں کہا کہ بنگلہ دیشی دراندازوں کی شناخت کرنا بہت ہی ضروری ہے۔ اترپردیش ہی نہیں پورا ملک داخلی سلامتی کے مسئلہ سے جوجھ رہا ہے۔ ہندوستان میں زیادہ تر درانداز بنگلہ دیش سے آئے ہیں۔

کہا۔ ہر درانداز کے خلاف کی جائے گی کارروائی

Loading...

یوگی آدتیہ ناتھ نے بھروسہ دلایا کہ بی جے پی آسام کی طرح ملک کی دیگر ریاستوں میں بھی این آر سی نافذ کرے گی۔ ملک میں دراندازی کرنے والا بنگلہ دیشی ہو، پاکستانی ہو یا کسی دوسرے ملک کا ہو، سبھی کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔

بتا دیں کہ 16 ستمبر کو ہریانہ کے وزیر اعلیٰ منوہر لال کھٹر نے کہا تھا کہ وہ ریاست میں این آر سی کے نفاذ کے تئیں پابند عہد ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ ریاستی سرکار کنبوں کے شناختی کارڈ پر تیزی سے کام کر رہی ہے۔ اس کے ڈیٹا کا این آر سی میں استعمال کیا جائے گا۔ آسام میں 31 اگست کو جاری این آر سی کی آخری فہرست میں 19 لاکھ سے زیادہ لوگ شامل نہیں ہو پائے ہیں۔

 

Loading...