ایکسکلوزیو انٹرویو : مجھ پر ٹھاکر واد کا الزام لگانے والے الیکشن میں اپنی ضمانت بھی نہیں بچا پائے : یوگی آدتیہ ناتھ

اترپردیش میں ٹھاکر برادری کے افسران کو اعلی عہدوں پر فائز کرنے کے الزامات کی وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ نے تردید کی ۔ انہوں نے کہا کہ ایڈمنسٹریٹو لیول پر بڑے عہدوں پر افسران کی تقرری میرٹ کی بنیاد پر کی گئی ہے نہ کہ ذات کی بنیاد پر ۔

Sep 19, 2019 10:25 PM IST | Updated on: Sep 19, 2019 10:25 PM IST
ایکسکلوزیو انٹرویو : مجھ پر ٹھاکر واد کا الزام لگانے والے الیکشن میں اپنی ضمانت بھی نہیں بچا پائے : یوگی آدتیہ ناتھ

یوگی آدتیہ ناتھ

اترپردیش میں ٹھاکر برادری کے افسران کو اعلی عہدوں پر فائز کرنے کے الزامات کی وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ نے تردید کی ۔ انہوں نے کہا کہ ایڈمنسٹریٹو لیول پر بڑے عہدوں پر افسران کی تقرری میرٹ کی بنیاد پر کی گئی ہے نہ کہ ذات کی بنیاد پر ۔ انہوں نے یہ بات نیوز 18 نیٹ ورک گروپ کے ایڈیٹر ان چیف راہل جوشی کو دئے گئے ایک انٹرویو کے دوران کہی ۔

یوگی آدتیہ ناتھ نے کہا کہ مجھ پر ٹھاکرواد کا الزام لگانے والے الیکشن میں اپنی ضمانت بھی نہیں بچا سکے ۔ اس کے بعد سے ہی اپوزیشن پارٹیوں کے لیڈران مجھ پر بے بنیاد الزامات عائد کررہے ہیں ۔ یوگی آدتیہ نے کہا کہ سرکار میں میرے ساتھ کام کرنے والے لوگ الگ الگ برادری اور ذات سے ہیں ، جو اپنی قابلیت اور میرٹ کی بنیاد پر حکومت میں کام کررہے ہیں ۔

Loading...

یوگی حکومت سے براہمن ووٹرس خوش نہیں ہیں ؟ اس سوال کے جواب میں یوگی آدتیہ ناتھ نے کہا کہ اگر کسی نے اس طرح کی ذہنیت بنا رکھی ہے تو میں کسی کے ذہن کو بدل نہیں سکتا ۔ انہوں نے کہا کہ میرے چیف سکریٹری براہمن ہیں ، ان کے آگے کی قطار کا افسر براہمن ہے ، ریوینیو محکمہ کا ایڈیشنل چیف سکریٹری براہمن ہے ۔ ہمارے ڈی جی پی چھتریہ ہیں ۔ یوگی نے کہا کہ ان سبھی کی تقرریاں ان کی قابلیت اور میرٹ کی بنیاد پر ہوئی ہے نہ کی ذات کی بنیاد پر کی گئی ہے ۔

yogi-adityanath-rahul-joshi-02

وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ نے کہا کہ ان پر اس طرح کے الزامات پہلی مرتبہ نہیں لگ رہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ جب میں پہلی مرتبہ گورکھپور سے لوک سبھا کا الیکشن لڑ رہا تھا ، تب بھی میرے خلاف ایسے الزامات عائد کئے گئے تھے ۔ یوگی نے کہا کہ ایک اپوزیشن پارٹی ان کے خلاف اس طرح کے الزامات لگاتی رہتی ہے اور انہیں گھیرنے کی کوشش کرتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ آج اترپردیش میں گورکھ پیٹھ میں سب سے زیادہ براہمن بچے رہتے ہیں ، جن کے رہنے اور کھانے کا بندوبست پیٹھ کی جانب سے کیا جاتا ہے ۔

Loading...