سونیا ، راہل اور پرینکا گاندھی کی ایس پی جی سیکورٹی ہٹائی گئی ، یہ ہے بڑی وجہ

مرکزی حکومت نے گاندھی خاندان کے افراد سونیا گاندھی ، راہل گاندھی اور پرینکا گاندھی کی سیکورٹی میں تعینات ایس پی جی کو ہٹانے کا فیصلہ کیا ہے اور اب انہیں سی آر پی ایف کے کمانڈوں کی نگرانی میں زیڈ پلس سیکورٹی دی جائے گی۔

Nov 08, 2019 08:59 PM IST | Updated on: Nov 08, 2019 08:59 PM IST
سونیا ، راہل اور پرینکا گاندھی کی ایس پی جی سیکورٹی ہٹائی گئی ، یہ ہے بڑی وجہ

سونیا ، راہل اور پرینکا گاندھی کی ایس پی جی سیکورٹی ہٹائی گئی ، یہ ہے بڑی وجہ

مرکزی حکومت نے گاندھی خاندان کے افراد سونیا گاندھی ، راہل گاندھی اور پرینکا گاندھی کی سیکورٹی میں تعینات ایس پی جی کو ہٹانے کا فیصلہ کیا ہے اور اب انہیں سی آر پی ایف کے کمانڈوں کی نگرانی میں زیڈ پلس سیکورٹی دی جائے گی۔ وزارت داخلہ کے ایک افسر نے بتایا کہ گاندھی خاندان کے افراد کی سیکورٹی کا نظم اور ان کی جان کو خطرے کا جائزہ لینے کے بعد یہ فیصلہ کیا گیا ۔ سیکورٹی اور خفیہ ایجنسیوں سے بھی اس سلسلے میں معلومات حاصل کی گئی ہے۔ جائزہ میں اس بات پر بھی غور کیا گیا کہ گاندھی خاندان کو ابھی کسی طرح کا براہ راست خطرہ نہیں ہے۔

انہوں نے بتایا کہ اب گاندھی خاندان کے افراد کے سیکورٹی کی ذمہ داری سی آر پی ایف کے کمانڈو دستے کو سونپی جائے گی ۔ انہیں زیڈ پلس زمرے کی سیکورٹی دی جائے گی۔ خیال رہے کہ اندرا گاندھی اور راجیو گاندھی کو قتل کردیا گیا تھا۔ قابل ذکر ہے کہ وزارت داخلہ نے حال ہی میں سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ کی ایس پی جی سیکورٹی کو واپس لے کر انہیں زیڈ پلس سیکورٹی د ی تھی ۔

Loading...

ادھر کانگریس پارٹی نے ایس پی جی ہٹانے کو سیاسی جذبے سے لی گئی کارروائی قرار دیا اور دعوی کیا کہ یہ فیصلہ سلامتی ایجنسیوں کے گاندھی خاندان کو خطرہ بتانے کے باوجود لیا گیا ہے۔ کانگریس جنرل سکریٹری کے سی وینوگوپال اور پارٹی کے میڈیا کے انچارج رندیپ سرجےوالا نے پارٹی ہیڈکوارٹر میں منعقدہ پریس کانفرنس میں کہا ہے کہ وہ یہ فیصلہ وزیراعظم نریندر مودی اور وزیر داخلہ امت شاہ کی جوڑی نے بدلے کی جذبے سے لیا ہے اور ان کا یہ فیصلہ گاندھی خاندان کے اراکین کی زندگی سے کھیلواڑ ہے۔

انہوں نے کہا کہ حیرت ہے کہ خود حکومت کی سلامتی ایجنسیوں نے گاندھی خاندان کے اراکین کی زندگی کو خطرہ قرار دیا ہے۔ ان ایجنسیوں نے گزشتہ دو برسوں میں چار مرتبہ کہا کہ راہل گاندھی کو علیحدگی پسندوں، نکسل وادیوں اور خالصتانی جیسی کئی تنظیموں سے خطرہ ہے۔ سلامتی ایجنسیوں نے بھی خود راہل گاندھی کو اس معاملے میں خط لکھ کر اس کی اطلاع دی ہے۔

Loading...