ہردا میں سوشل میڈیا پر پابندی جاری ، خلاف ورزی پر دفعہ 188 کے تحت ہوگی کارروائی

ہردا : مدھیہ پردیش کے ہردا ضلع میں ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ اور کلکٹر شریکانت بھنوٹ نے امن قائم رکھنے کےلئے فیس بک اور واٹس ایپ سمیت سوشل میڈیا کےلئے پابندی کا حکم جاری کیا ہے۔ یہ حکم تعزیرات ہند1973 کی دفعہ 144کے تحت جاری کیا گیا ہے۔کل رات سے یہ پابندی مکمل ضلع میں 20فروری کی شام پانچ بجے تک جاری رہےگی۔

Jan 22, 2016 02:32 PM IST | Updated on: Jan 22, 2016 02:32 PM IST
ہردا میں سوشل میڈیا پر پابندی جاری ، خلاف ورزی پر دفعہ 188 کے تحت ہوگی کارروائی

ہردا : مدھیہ پردیش کے ہردا ضلع میں ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ اور کلکٹر شریکانت بھنوٹ نے امن قائم رکھنے کےلئے فیس بک اور واٹس ایپ سمیت سوشل میڈیا کےلئے پابندی کا حکم جاری کیا ہے۔  یہ حکم تعزیرات ہند1973 کی دفعہ 144کے تحت جاری کیا گیا ہے۔کل رات سے یہ پابندی مکمل ضلع میں 20فروری کی شام پانچ بجے تک جاری رہےگی۔

جاری حکم کے مطابق اس دوران کوئی بھی شخص یہ گروہ کسی بھی طرح سے سوشل میڈیا جیسے واٹس ایپ ،فیس بک ،ایس ایم ایس ،ای میل یا موبائل سے پیغام کے ذریعہ کوئی بھی ایسی اطلاع یا پیغام کی تشہر و نشر نہیں کر سکتا جس سے ضلع میں امن وامان کو خطرہ ہو یا مذہبی ہم آہنگی میں خلل پیدا ہویا پھر عوام اور مجموعہ میں اس اطلاع یا پیغام سے ڈر اور خوف کا موحول پیدا ہو۔کوئی بھی شخص اس قسم کے پیغامات نہ تو پھیلائے گا اور نہ ہی کسی دیگر شخص سے موصول پیغام کو نشر کرے گا ۔ اس حکم کی خلاف ورزی پر دفعہ 188کے تحت کارروائی کی جائے گی۔

ہردا ضلع کے کھرکیا ریلوے اسٹیشن پر گزشتہ دنوں مبینہ طور پر گائےکا گوشت کے سلسلے میں چند لوگوں نے ٹرین میں جارہے ایک جوڑے کی پٹائی کر دی تھی۔اس کے بعد پیدا ہوئے تنازعہ میں ملوث کئی افراد کی گرفتاری بھی ہوئی ہے۔

Loading...

Loading...