ہریانہ میں بی جے پی بنائے گی حکومت ، جے جے پی کا ہوگا نائب وزیر اعلی

ہریانہ میں حکومت بنانے کےسلسلے میں بھارتیہ جنتاپارٹی اور جن نائک جنتا پارٹی کے درمیان معاہدے کو جمعہ کی رات حتمی شکل دے دی گئی ۔

Oct 25, 2019 11:11 PM IST | Updated on: Oct 25, 2019 11:43 PM IST
ہریانہ میں بی جے پی بنائے گی حکومت ، جے جے پی کا ہوگا نائب وزیر اعلی

ہریانہ میں بی جے پی بنائے گی حکومت ، جے جے پی کا ہوگا نائب وزیر اعلی

ہریانہ میں حکومت بنانے کےسلسلے میں بھارتیہ جنتاپارٹی (بی جے پی) اور جن نائک جنتا پارٹی (جے جے پی) کے درمیان معاہدے کو جمعہ کی رات حتمی شکل دے دی گئی ۔ بی جے پی کے صدر امت شاہ سے جے جے پی کے صدر دُشینت چوٹالا نے دیر رات ملاقات کی ۔ اس ملاقات کے بعد امت شاہ نے ہریانہ میں بی جے پی اور جے جے پی اتحاد کی حکومت بنانے کا اعلان کیا۔ اتحاد میں وزیر اعلی بی جے پی کا ہوگا جبکہ جے جے پی کا نائب وزیر اعلی ہوگا ۔

اس موقع پر دونوں کے علاوہ بی جے پی کے کارگزار صدر جے پی نڈا اور ہریانہ کے وزیراعلیٰ منوہر لال کھٹر اور دیگر رہنما موجود تھے۔ ہفتہ کے روز بی جے پی کے اراکین اسمبلی پارٹی کے رہنما منتخب ہونے کے بعد ریاست میں حکومت بنانے کا عمل تیز کیا جائے گا۔

امت شاہ نے اتحاد کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ کئی آزاد اراکین اسمبلی نے بھی حمایت کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہفتہ کےروز بی جے پی کے اراکین اسمبلی پارٹی کے رہنما کے انتخاب ہوجانے کے بعد ریاست میں نئی حکومت کی تشکیل تیز کر دی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ ہریانہ کے عوام نے جو ووٹ دیا ہے اس کا احترام کرتے ہوئے دونوں پارٹیوں کے رہنماؤں نے مل کر حکومت بنانے کا فیصلہ کیا ہے۔ نئی حکومت ریاست میں وزیراعظم نریندر مودی کی قیادت میں تیزی سے ترقی کے کام کو آگے بڑھائے گی۔

اس موقع پر دُشینت چوٹالا نے کہا کہ ریاست میں مستحکم حکومت کے لیے دونوں پارٹیوں کا ایک ساتھ آنا ضروری تھا۔ ہم نے ریاست کے حق میں اتحاد کا فیصلہ کیا۔ قابل ذکر ہے کہ بی جے پی جے جے پی کی مدد سے دہلی میں 25 لاکھ جاٹ ووٹر کے توسط سے وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال کے سامنے سخت چیلنج کھڑا کر سکتی ہے۔

Loading...