حامد انصاری نے جے ڈی یو ممبر پارلیمنٹ  انل ساہنی کے خلاف کیس چلانے کی دی منظوری

نئی دہلی : راجیہ سبھا کے چیئرمین حامد انصاری نے جے ڈی یو کے ممبر پارلیمنٹ انل ساہنی کے خلاف کیس چلانے کی منظوری دے دی ہے ۔

Apr 15, 2016 12:44 AM IST | Updated on: Apr 15, 2016 02:51 PM IST
حامد انصاری نے جے ڈی یو ممبر پارلیمنٹ  انل ساہنی کے خلاف کیس چلانے کی دی منظوری

نئی دہلی : راجیہ سبھا کے چیئرمین حامد انصاری نے جے ڈی یو کے ممبر پارلیمنٹ انل ساہنی کے خلاف کیس چلانے کی منظوری دے دی ہے ۔ جے ڈی یو لیڈر انل ساہنی پر ایئر ٹکٹ کا فرضی بل جمع کرا کر بل کی ادائیگی کرانے کا الزام ہے ۔

بہار سے ممبر پارلیمنٹ ساہنی راجیہ سبھا سے مبینہ طور پر ایسے پہلے لیڈر ہیں ، جنہیں چیئرمین سے اس سلسلے میں منظوری ملنے کے بعد سی بی آئی کیس چلائے گی۔ .

Loading...

اس معاملے میں سی بی آئی دہلی کے پٹیالہ کورٹ میں پہلے ہی چارج شیٹ داخل کر چکی ہے ۔ انل بہار کوٹے سے جے ڈی یو سے راجیہ سبھا ممبر پارلیمنٹ ہیں۔ ساہنی پر تقریبا 24 لاکھ روپے کے فرضی بل کی ادائیگی کرانے کا الزام ہے ۔

اس چارج شیٹ میں ساہنی کے ساتھ نامزد دیگر افراد  میں دہلی کی ایئر کروز ٹریول پرا لمیٹڈ  کے ملازم انوپ سنگھ پوار، ایئر انڈیا کے اس وقت کے آفس سپرنٹنڈنٹ (ٹریفک) این ایس نائر اور اروند تیواری شامل ہیں ۔ وہیں دوسری بار رکن پارلیمنٹ بنے ساہنی کا دعوی ہے کہ ان کی شبیہ خراب کرنے کے لئے یہ بی جے پی حکومت کی سیاسی سازش ہے ۔

انل ساہنی کی مدت کار اپریل 2018 میں ختم ہورہی ہے۔  معاملہ سامنے آنے پر انل ساہنی نے اسے سیاسی سازش قرار دیا تھا ۔ راجیہ سبھا اور لوک سبھا کے تمام ممبران کو ایک سال میں 43 مفت ایئر ٹکٹ دیے جاتے ہیں ۔

غور طلب ہے کہ تمام ممبران پارلیمنٹ (راجیہ سبھا اور لوک سبھا دونوں کے) کو سال میں اپنے لئے، اپنے کنبہ کے ارکان اور ساتھیوں کے لئے اپنے حلقہ کے گھریلو سفر کے لئے 34 مفت ہوائی ٹکٹ ملتا ہے ۔

Loading...