مدھیہ پردیش میں ایک اور گھوٹالہ کا انکشاف

ریوا : گھوٹالوں کے لئے مشہور مدھیہ پردیش میں ایک اور گھوٹالہ سامنے آیا ہے

Jul 25, 2015 08:50 PM IST | Updated on: Jul 25, 2015 08:52 PM IST
مدھیہ پردیش میں ایک اور گھوٹالہ کا انکشاف

ریوا :  گھوٹالوں کے لئے مشہور مدھیہ پردیش میں ایک اور گھوٹالہ سامنے آیا ہے ۔  اسکالرشپ اور وياپم گھوٹالے کے بعد اب کسانوں کو دی جانے والی فصلوں کے بیج میں ایک بڑا گھوٹالہ چھتر پور ضلع میں اجاگر ہوا ہے ۔

چھتر پور ضلع میں زرعی شعبہ کی طرف سے کسانوں کو مالی سال 2014 - 2015 میں حکام نے کاغذوں میں بیج کو تقسیم کر ایک بڑے گھوٹالے کو انجام دیا ہے ۔  لسٹ کے مطابق چھتر پور وکاس کھنڈ کے تقریبا 80 گاووں کے کسانوں کو ربیع اور خریف کے موسم  میں اڑد، مونگ، ارہر، چنا، گینہوں  اور سویا بین کا بیج دیا گیا ۔

جب اس کے بارے میں کسانوں سے پوچھ گچھ کی گئی تو یہ بات سامنے آئی کہ بیج تو کسانوں تک پہنچ ہی نہیں رہے ہیں ،  کسانوں کی لسٹ میں گھوٹالے کا شک اس وقت ہوا جب حکام نے مردہ کسانوں کو کاغذوں میں بیج تقسیم کر کے گھوٹالے کو انجام دیا ۔

معاملہ سامنے آنے پر اب کسان اس گھوٹالے کے لئے قصوروار حکام پر کارروائی کا مطالبہ کر رہے ہیں ،  وہیں ضلع کلکٹر نے بھی کارروائی کرتے ہوئے پورے معاملے میں جانچ کا حکم دیا ہے ۔

Loading...

Loading...