وياپم گھوٹالا : اب سامنے آئے گا نمرتا ڈامور کی موت کا سچ ، سی بی آئی نے شروع کی تحقیقات

اندور میڈیکل کالج کی طالبہ نمرتا ڈامور کی موت کے معاملے میں سی بی آئی نے جانچ شروع کر دی ہے.

Aug 14, 2015 12:39 PM IST | Updated on: Aug 14, 2015 12:39 PM IST
وياپم گھوٹالا  : اب سامنے آئے گا نمرتا ڈامور کی موت کا سچ ،  سی بی آئی نے شروع کی تحقیقات

اجین :  اندور میڈیکل کالج کی طالبہ نمرتا ڈامور کی موت کے معاملے میں سی بی آئی نے جانچ شروع کر دی ہے. سی بی آئی کی 13 رکنی ٹیم نے جائے حادثہ پہنچ کر تقریبا دو گھنٹے تک جانچ کی ۔ سی بی آئی نے گزشتہ ماہ نمرتا کی موت کے معاملے میں نامعلوم افراد کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کیا تھا ۔

ایس پی ہری سنگھ کی قیادت میں سی بی آئی کی تفتیشی ٹیم كائتھا تھانہ علاقے کے بھیروپورہ ریلوے ٹریک پر گئی ۔  اسی ٹریک پر 7 جنوری 2012 کو نمرتا کی لاش ملی تھی ۔  سی بی آئی حکام نے واقعہ کے وقت لی گئی تصاویر کے ذریعے پورے معاملے کو سمجھنے کی کوشش کی ۔ سی بی آئی نے جائے حادثہ کی ویڈیو گرافی کی اور ساتھ ہی مکمل کارروائی کو بھی ویڈیو کیمرے میں قید کیا ۔

مقامی لوگوں اور عینی شاہدین کے بیانات درج

سی بی آئی کے حکام نے سب سے پہلے نمرتا ڈامور کی لاش دیکھنے والے راہل انجنا کے ساتھ  ریلوے ٹریک مین کا بیان درج کیا اور اس کے بعد جائے حادثہ کے ارد گرد مقامی لوگوں کے بیانات بھی ریکارڈ کئے گئے ۔ پوچھ گچھ کے دوران واقعہ سے متعلق حقائق کو كھگالنے کی کوشش بھی کی گئی ۔

Loading...

ٹياي اور تفتیشی افسر سے پوچھ گچھ

جائے حادثہ پر تقریبا دو گھنٹے تک تفتیش کرنے کے بعد سی بی آئی کی ٹیم نے كائتھا تھانے کا رخ کیا اور یہاں پر ٹی آئی منی پریہار اور تفتیشی افسر ایس آئی مادھو شرما سے بھی پوچھ گچھ کی ۔ دونوں اہلکار سے واقعہ سے وابستہ معلومات، فارنسک رپورٹ اور جائے حادثہ پر ملے ثبوت کے بارے میں سوال کیا گیا ۔ بتایا جا رہا ہے کہ سی بی آئی نے واقعہ کی تحقیقات کے طریقے کو لے کر بھی کچھ سوالات کئے ۔

 کال ڈیٹیل ریکارڈ طلب 

سی بی آئی کی تفتیشی ٹیم نے سائبر سیل انچارج دیپکا شنڈے سے بھی ملاقات کی ۔ تفتیشی ٹیم نے دیپکا شنڈے سے نمرتا کی کال ڈیٹیل اپ ڈیٹ کرنے کے لئے کہا اور ساتھ ہی 7 جنوری 2012 سے اب تک کے سارے واقعات کا ریکارڈ بھی طلب کیا ہے ۔

Loading...