یہاں ہندو بھائیوں کی کلائی کے لئے مسلم خواتین بناتی ہیں راكھياں

برہان پور : مذہب نہیں سکھاتا آپس میں بیر رکھنا، ہندی ہیں ہم وطن ہے هندوستاں ہمارا ۔ یہ شعرمدھیہ پردیش کے كھرگون میں مسلم خاندانوں پربالکل صحیح ثابت ہوتا ہے ۔

Aug 28, 2015 04:06 PM IST | Updated on: Aug 28, 2015 04:06 PM IST
یہاں ہندو بھائیوں کی کلائی کے لئے مسلم خواتین بناتی ہیں راكھياں

برہان پور : مذہب نہیں سکھاتا آپس میں بیر رکھنا، ہندی ہیں ہم وطن ہے هندوستاں ہمارا ۔ یہ شعرمدھیہ پردیش کے كھرگون میں مسلم خاندانوں پربالکل صحیح ثابت ہوتا ہے ۔ یہاں رکشا بندھن پر ہندو بہنوں کی حفاظت کے لئے بھائیوں کی کلائی پر باندھی جانے والی راكھياں مسلم کنبہ بناتے ہیں ۔

دراصل طویل عرصہ سے راکھی بنانے کا کام کر رہے یہ مسلم خاندان جہاں فرقہ وارانہ ہم آہنگی کی مثال پیش کر رہے ہیں وہیں بھائی چارے کو بھی مضبوط کر رہے ہیں ۔بھائی بہن کے مقدس رشتے کے تہوار پر تقریبا 50 سال سے زیادہ عرصہ سے راکھی بنا رہی مسلم خواتین راکھی بنانے کو لے کرکافی پرجوش رہتی ہیں۔

تقریبا 20 سالوں سے راکھی بنانے کا کام کرنے والی ایک مسلم خاتون شهزادي نے بتایا کہ راکھی کے تہوار کا ہمیں بےصبری سے انتظار رہتا ہے ۔ ان کا کہنا ہے کہ بھائی بہن کے تہوار پر راکھی بنانا اچھا لگتا ہے ۔ برسوں سے ہم راکھی بناتے آ رہے ہیں ۔ انہوں نے بتایا کہ مسلمان ہونے کے بعد بھی اس تہوار میں مذہب کو آڑے نہیں آنے دیتے ہیں۔

ایک مسلم نوجوان شیخ صدیق کا کہنا ہے کہ ہندوؤں کے تہوار کے لئے راکھی بنانے پر دونوں مذاہب کے لوگوں کے درمیان محبت بڑھتی ہے ۔ شیخ صدیق کا کہنا ہے کہ ذات پات تو ہم نے بنا دیئے ہیں، جبکہ اوپر والا تو ایک ہے ۔

Loading...

كھرگون کے مسلم سماج کے لوگوں کا کہنا ہے کہ رکشا بندھن پر راکھی کی فروخت کی وجہ سے جہاں ان کی آمدنی بڑھتی ہےوہیں دونوں مذاہب کے درمیان بھائی چارے کو بھی فروغ ملتا ہے ۔

Loading...