آبروریزی کے معاملہ میں سرفہرست مدھیہ پردیش میں نو شادی شدہ لڑکی کی اجتماعی عصمت دری

مدھیہ پردیش کے دیواس میں ایک نو شادی شدہ خاتون کی اجتماعی آبروریزی کا سنسنی خیز معاملہ سامنے آیا ہے

Aug 29, 2015 09:03 AM IST | Updated on: Aug 29, 2015 09:03 AM IST
آبروریزی کے معاملہ میں سرفہرست مدھیہ پردیش میں نو شادی شدہ لڑکی کی اجتماعی عصمت دری

اجین : مدھیہ پردیش کے دیواس میں ایک نو شادی شدہ خاتون کی اجتماعی آبروریزی کا سنسنی خیز معاملہ سامنے آیا ہے ۔ اس حیوانیت کو پانچ لوگوں نے انجام دیا ہے ۔ ملزمان میں سے ایک متاثرہ کا شناسا بتایا جا رہا ہے ۔ پولیس نے مقدمہ درج کر کے ملزمان کی تلاش شروع کر دی ہے ۔ غور طلب ہے کہ این سی آر بی کی سال 2014 کی رپورٹ کے مطابق آبروریزی کے سب سے زیادہ معاملے مدھیہ پردیش میں سامنے آئے تھے جبکہ اجتماعی آبروریزی میں اترپردیش سرفہرست تھا ۔

اجتماعی آبروریزی کا یہ معاملہ شہر کے سروودیہ نگر علاقہ میں پیش آیا ہے ۔ یہاں کچھ دنوں قبل ہی رشتہ ازدواج میں منسلک ہونے والی لڑکی کی پانچ لوگوں نے آبروریزی کی ۔ متاثرہ نے بتایا کہ ملزموں نے اس کے دیور کے ساتھ مار پیٹ کر کے اسے اغوا کر لیا اور پھر مہاتما گاندھی ضلع اسپتال کے پیچھے اس کے ساتھ پانچ لوگوں نے باری باری سے یہ وحشیانہ حرکت کی۔

دیواس کی صنعتی تھانہ پولیس نے پانچ ملزموں کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے ۔ ملزموں میں سے ایک کی شناخت بھوندو کے طور پر کی گئی ہے ۔ متاثرہ نے بتایا کہ وہ بھوندو کی جانتی ہے ۔ اس حیوانیت میں ساتھ دینے والے اس کے دیگر ساتھیوں کے بارے میں پولیس معلومات اکٹھا رہی ہے۔

پولیس نے خاتون کا میڈیکل ٹیسٹ بھی کرایا ہے ۔ میڈیکل رپورٹ کی بنیاد پر بھی پولیس ملزموں کے خلاف ثبوت اکٹھا رہی ہے۔

Loading...

Loading...