مدھیہ پردیش میں بارش کا قہر جاری، اب تک 54 افراد ہلاک، 10 ہزار سے زیادہ مکانات کو نقصان پہنچا

مدھیہ پردیش میں گزشتہ 10 دنوں سے جاری بھاری بارش اور سیلاب کا قہر جاری ہے ،

Jul 29, 2015 07:17 PM IST | Updated on: Jul 29, 2015 07:17 PM IST
مدھیہ پردیش میں بارش کا قہر جاری، اب تک 54 افراد ہلاک، 10 ہزار سے زیادہ مکانات کو نقصان پہنچا

اجین  :  مدھیہ پردیش میں گزشتہ 10 دنوں سے جاری بھاری بارش اور سیلاب کا قہر جاری ہے ، ابھی تک ریاست میں بارش سے جڑے حادثوں میں 54 افراد اپنی جان گنوا چکے ہیں ، سب سے زیادہ 19 لوگوں کی موت دارالحکومت بھوپال سے متصل سيہور ضلع میں ہوئی ہے ، محکمہ موسمیات نے آنے والے دنوں بھی بھاری بارش کی وارننگ جاری کی ہے ۔ بھوپال میں واقع سیلاب کنٹرول پینل کے مطابق اب تک بارش سے 54 لوگوں کی موت ہو چکی ہے ۔  جانوروں کو بھی کافی نقصان پہنچا ہے ، بھاری بارش کی وجہ سے دس ہزار مکانوں کو بھی نقصان پہنچا ہے ،  ریاست کے کئی اضلاع میں سیلاب جیسی صورتحال ہے ۔ مدھیہ پردیش میں زیادہ تر ندیوں کے خطرے کے نشان سے اوپر بہنے کی وجہ سے کئی علاقوں میں سیلاب آ گیا ہے ،  جس میں جان مال کا بھاری نقصان ہوا ہے ۔ ریاست کے کل آٹھ اضلاع میں تقریبا 54 لوگوں کی جان گئی ہے اور 10 ہزار سے زیادہ مکانات کو نقصان پہنچا ہے ۔ مرنے والوں کی تعداد سب سے زیادہ سيہور میں ہے جہاں سیلاب کی وجہ سے 19 لوگوں کی جانیں چلے گئی ہیں ۔

معاوضہ کی رقم میں اضافہ

ریاستی حکومت نے قدرتی آفت سے ہونے والے  نقصان کیلئے  دی جانے والی امدادی رقم میں اضافہ کردیا ہے ۔  مرنے والوں کے لواحقین کو دی جانے والی امدادی رقم ڈیڑھ لاکھ سے بڑھا کر 4 لاکھ کردی گئی ہے ۔ اسی کے ساتھ پوری طرح تباہ ہوچکے خام اور پختہ مکانات کے لئے 95 ہزار کی امدادی رقم دی جائے گی ۔

Loading...

Loading...