دہلی میں ایک اور اسکول کو بم سے اڑانے کی دھمکی، حرکت میں پولیس اور فائر ڈپارٹمنٹ

بتایا جا رہا ہے کہ یہ دھمکی ای میل کے ذریعے دی گئی ہے۔ فی الحال دہلی پولیس اور فائر ڈپارٹمنٹ کی ٹیم موقع پر پہنچ گئی ہے اور تحقیقات جاری ہے۔

بتایا جا رہا ہے کہ یہ دھمکی ای میل کے ذریعے دی گئی ہے۔ فی الحال دہلی پولیس اور فائر ڈپارٹمنٹ کی ٹیم موقع پر پہنچ گئی ہے اور تحقیقات جاری ہے۔

بتایا جا رہا ہے کہ یہ دھمکی ای میل کے ذریعے دی گئی ہے۔ فی الحال دہلی پولیس اور فائر ڈپارٹمنٹ کی ٹیم موقع پر پہنچ گئی ہے اور تحقیقات جاری ہے۔

  • News18 Urdu
  • Last Updated :
  • Delhi, India
  • Share this:
    دہلی۔ ملک کی راجدھانی دہلی میں ایک اسکول کو بم سے اڑانے کی دھمکی موصول ہوئی ہے۔ یہ متھرا روڈ پر واقع دہلی پبلک اسکول ہے جس  کے بم سے اڑانے کی اطلاع پولیس کو ملی ہے۔ بتایا جا رہا ہے کہ یہ دھمکی ای میل کے ذریعے دی گئی ہے۔ فی الحال دہلی پولیس اور فائر ڈپارٹمنٹ کی ٹیم موقع پر پہنچ گئی ہے اور تحقیقات جاری ہے۔

    جانکاری کے مطابق بم سے اڑانے کی دھمکی ملنے کے بعد دہلی پولیس کی ایمبولینس اور کمانڈو جوان دہلی کے متھرا روڈ پر واقع ڈی پی ایس اسکول پہنچ گئے ہیں۔ اس کے علاوہ بچوں کے اہل خانہ بھی اسکول پہنچ گئے ہیں۔ پولیس کے مطابق ابتدائی تفتیش میں یہ کسی کی شرارت معلوم ہوتی ہے۔ تاہم، بچےمحفوظ ہیں اور کسی بھی طرح سے گھبرانے کی کوئی بات نہیں ہے۔

    دہلی پولیس کا کہنا ہے کہ صبح 8 بج کر 10 منٹ پر 100 نمبر پر کال آئی تھی اور اس دوران اسکول میں بم رکھنے کی اطلاع دی گئی۔ پولیس فوری طور پر موقع پر پہنچ گئی ہے اور تحقیقات کر رہی ہے۔





    گزشتہ ہفتے بھی ایک اسکول کو دھمکی دی گئی تھی۔

    بتادیں کہ کچھ اسی طرح گزشتہ ہفتے 12 اپریل کو دہلی کے ایک اسکول کو بم سے اڑانے کی کی دھمکی دی گئی تھی۔ تاہم بعد میں موقع سے کچھ نہیں ملا۔ دہلی کے صادق نگر میں واقع انڈین اسکول کو بھی ای میل کے ذریعے بم سے اڑانے کی بات سامنے آئی تھی۔ بعد ازاں پولیس نے اسکول کو خالی کرا دیا تھا۔ بم ڈسپوزل اسکواڈ نے موقع پر تفتیش کی تو بم جیسی کوئی مشکوک چیز نہیں ملی تھی۔ ایسی صورتحال میں اب بھی خیال کیا جا رہا ہے کہ یہ بھی فرضی کال ہے۔ تاہم پولیس احتیاطی اقدام کے طور پر تحقیقات کر رہی ہے۔ کیونکہ یہ بچوں سے جڑا معاملہ ہے۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: