بہار بند: ججوں کو روکنے پر ہائی کورٹ سخت ناراض ، سکریٹری سے جواب طلب

حاجی پور۔ پٹنہ روڈ اور گاندھی سیتو کو آر جے ڈی کے کارکنوں نے جام کر دیا ہے

Jul 27, 2015 12:06 PM IST | Updated on: Jul 27, 2015 03:19 PM IST
بہار بند: ججوں کو روکنے پر ہائی کورٹ سخت ناراض ، سکریٹری سے جواب طلب

پٹنہ: نسلی مردم شماری کے اعداد و شمار عام کرنے کا مطالبہ کر رہے آر جے ڈی سربراہ لالو پرساد یادو اتوار کو ایک دن کی بھوک ہڑتال پر تھے ، وہیں پیر کو بہار بند کا اعلان کیا ہے اور اس کی سی ایم نتیش کمار نے بھی حمایت کی ہے ۔  لالو کے بہار بند کا وسیع پیمانے پر اثر نظر آ رہا ہے ۔

بند کے دوران ججوں کو روکنے پر ہائی کورٹ سخت ناراض ہے ۔ جسٹس راکیش کمار نے چیف سکریٹری سے اس معاملہ پر جواب بھی طلب کیا ہے۔ ادھر بند کے دوران پولیس نے آر جے ڈی سربراہ لالو پرساد سمیت ان کے کئی حامیوں کو حراست میں لے لیا ہے ۔

ای ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق حاجی پور۔ پٹنہ روڈ اور گاندھی سیتو کو آر جے ڈی کے کارکنوں نے جام کر دیا ہے ، اتنا ہی نہیں آرجے ڈی کارکنوں نے بیگو سرائے میں این ایچ 31 اور 24 کو جام کر دیا  ہے ، راشٹریہ جنتا دل نے بہار بند کے دوران گاندھی سیتو کو صبح 7 بج کر 22 منٹ پر جام کر دیا ، وہیں حاجی پور ٹول پلازہ تک گاڑیوں کی قطار لگی ہے ۔  دودھ کی گاڑی، ایمبولینس بھی جام میں پھنسے ہیں اور گاڑیوں کی آمدورفت مکمل طور پر ٹھپ ہو گئی ہے ۔ لوگ گاڑیوں سے اترکر پیدل پٹنہ جا رہے ہیں ۔  آر جے ڈی کے کارکنوں نے راماشيش چوک پر ٹائر جلا کر روڈ جام کر دیا ہے ، ایک بھی دکان نہیں کھلی ہے ، گوپال گنج میں ہتھوا اسٹیشن پر آرجے ڈی کارکنوں نے ٹرین کو روک دیا ہے ۔

آپ کو بتا دیں کہ لالو یادو نے مرکزی حکومت اور بی جے پی کی عوام مخالف پالیسیوں کے خلاف پورے بہار کو بند رکھنے کا فیصلہ کیا تھا ، وہیں نتیش کمار کی پارٹی جے ڈی یو نے بھی اس بند کو اپنی حمایت دیدی ہے ۔

Loading...

لالو یادو نے بہار بند کے دوران پیر کو تمام ضروری خدمات، اسپتال، ایمبولینس، ریلوے، بچوں کے اسکول اور اسکولی بسوں کو چلنے دینے کی ہدایت دی ہے ۔  بہار بند کے دوران آر جے ڈی کے تمام سینئر رہنما پٹنہ میں موجود رہیں گے۔

وہیں بہار بند کو لے کر پولیس نے بھی سخت سیکورٹی کا بندوبست کررکھا ہے ،  حساس مقامات پر پولیس فورس کو تعینات کیا گیا ہے ،  پولیس نے مظاہرین سے تشدد نہیں کرنے کی اپیل کی ہے ،  پولیس نے کہا ہے کہ تشدد کرنے والے مظاہرین پر سخت قانونی کارروائی کی جائے گی ۔  پولیس نے کہا کہ جام لگانے والے مظاہرین پر ایف آئی آر درج کی جائے گی ۔

غور طلب ہے کہ اتوار کو نسلی مردم شماری کے اعداد و شمار کو جلد عام کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے لالو پرساد یادو پٹنہ کے گاندھی میدان میں واقع بابائے قوم مہاتما گاندھی کے مجسمے کے پاس ایک  دن کی بھوک ہڑتال پر بیٹھے تھے ،  لالو کے ساتھ جے ڈی یو کے صدر شرد یادو سمیت پارٹی کے کئی لیڈروں نے بھی بھوک ہڑتال میں حصہ لیا تھا ۔

Loading...