ہوم » نیوز » No Category

سری نگر کے ہیلی کاپٹر حادثہ میں افسروں کے خلاف کارروائی پر ملیٹری کورٹ نے لگائی روک

گزشتہ سال  بالا کوٹ ائیر اسٹرائیک کے ٹھیک ایک دن بعد بڈگام میں یہ حادثہ پیش آیا تھا ۔ اس حادثہ میں دو افسران کے خلاف تادیبی کارروائی کی جانی تھی ۔ اس حادثہ میں ہندوستانی فضائیہ کے چھ جوان شہید ہوگئے تھے ، جن میں ہیلی کاپٹر کے پائلٹ بھی شامل تھے ۔

  • Share this:
سری نگر کے ہیلی کاپٹر حادثہ میں افسروں کے خلاف کارروائی پر ملیٹری کورٹ نے لگائی روک
سری نگر کے ہیلی کاپٹر حادثہ میں افسروں کے خلاف کارروائی پر ملیٹری کورٹ نے لگائی روک

سری نگر : ملیٹری کورٹ نے سری نگر میں ہوئے ہیلی کاپٹر ایم آئی 17 حادثہ کے معاملہ میں فوج کے افسران کے خلاف کارروائی پر روک لگادی ہے ۔ گزشتہ سال بالا کوٹ ائیر اسٹرائیک کے ٹھیک ایک دن کے بعد بڈگام میں یہ حادثہ پیش آیا تھا ۔ اس حادثہ میں دو افسران کے خلاف تادیبی کارروائی کی جانی تھی ۔ اس حادثہ میں ہندوستانی فضائیہ کے چھ جوان شہید ہوگئے تھے ، جن میں ہیلی کاپٹر کے پائلٹ بھی شامل تھے ۔


اس حادثہ کو لے کر ہندوستانی فضائیہ کے چیف آر کے ایس بھدوریا نے اعتراف کیا تھا کہ یہ حادثہ ہماری غلطی کی وہ سے ہوا ہے ۔ بھدوریا نے کہا تھا کہ اس معاملہ میں دو افسران کے خلاف کارروائی کی جائے گی ۔ اس ہیلی کاپٹر کو اسکواڈرن لیڈر سدھار اڑا رہے تھے ۔ ان کے ساتھ اسکواڈرن لیڈر نناد ، کمار پانڈے ، سارجنٹ وکرانت سہراوت ، کارپورل دیپک پانڈے اور پنکج کمار بھی تھے ۔


ہیلی کاپٹر نے 27 فروری 2019 کی صبح 10:10 بجے سری نگر ہوائی اڈہ سے اڑان بھی تھی ۔ اس سے تقریبا 40 منٹ پہلے پاکستانی فضائیہ کے جیٹ نے ہندوستانی فضائی حدود کی خلاف ورزی کرکے بڈگام میں دراندازی کی کوشش کی تھی ۔ تاہم ہندوستانی فضائیہ نے فوری کارروائی کرتے ہوئے اس کو کھڈیر دیا تھا ۔


اب اس حادثہ کے ذمہ دار ٹھہرائے گئے دونوں افسران گروپ کیپٹن ایس آر چودھری اور ونگ کمانڈر شیام نیتھانی نے کورٹ آف انکوائری کو چیلنج کیا تھا ۔ ملیٹری عدالت نے افسران کا موقف سننے کے بعد اگلی سماعت تک کسی بھی طرح کی کارروائی پر روک لگا دی ہے ۔ اس معاملہ کی اگلی سماعت 30 ستمبر کو ہوگی ۔ غور طلب ہے کہ گروپ کیپٹن ایس آر چودھری ہی حادثہ کے وقت سری نگر ائیربیس کے چیف آپریشنز افسر تھے ۔ وہیں ونگ کمانڈر نیتھانی سینئر ائیر ٹریفک کنٹرولر کے عہدہ پر تعینات تھے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Sep 14, 2020 11:39 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading