مرکزی وزیر بریندر سنگھ نہیں چکا پائے 25 لاکھ کا لون ، ڈیفالٹرقرار دئے گئے

چندی گڑھ : لون لے کر اسے نہیں ادا کرنے والوں میں عام لوگ ہی نہیں بلکہ ہریانہ کے کئی لیڈر بھی شامل ہیں ۔

Jul 16, 2015 04:39 PM IST | Updated on: Jul 16, 2015 04:42 PM IST
مرکزی وزیر بریندر سنگھ نہیں چکا پائے 25 لاکھ کا لون ، ڈیفالٹرقرار دئے گئے

چندی گڑھ : لون لے کر اسے نہیں ادا کرنے والوں میں عام لوگ ہی نہیں  بلکہ ہریانہ کے کئی لیڈر بھی شامل ہیں ۔  اس میں سے ایک بی جے پی لیڈر اور مرکزی وزیر بریندر سنگھ  کو ہریانہ  اسمبلی نے ڈیفالٹر قرار دیا ہے ۔  بریندر سنگھ نے 2007 اور 2009 میں ہریانہ اسمبلی سے لون لیا تھا ۔   بتایا جا رہا ہے کہ سنگھ نے ہریانہ اسمبلی سے گھر اور گاڑی کے لئے  لون لیا تھا لیکن اسے ادا  نہیں کر  سکے ، جس کی وجہ  سے انہیں اسمبلی نے بدھ کو ڈیفا لٹر قرار دیا ۔  ایک آر ٹی آئی کے جواب میں انکشاف ہوا تھا کہ ہریانہ اسمبلی سے سنگھ نے 2007 میں 12 لاکھ 50 ہزار کے دو لون تھے ۔  اس کے بعد انہوں نے 2009 میں کار لینے کے لئے 10 لاکھ روپے کا لون لیا تھا ۔  سنگھ پر ہریانہ اسمبلی سے لئے لون کا تقریبا 25 لاکھ روپے واجب الادا ہے ۔ آر ٹی آئی سے ہوئے انکشافات کے مطابق اسمبلی سے لون لینے کے بعد ادا نہیں  کرنے والے ابھی تک 13 'نیتا جی' کو ڈیفالٹر قرار دیا جا چکا ہے۔

Loading...

Loading...