یہ ہے پوپی پولیس ، مارک ڈرل کے دوران داغنے تھے کہیں ، داغ دئے کہیں اور آنسو گیس کے گولے

میرٹھ : یوپی پولیس سدھرنے کا نام نہیں لے رہی ہے ۔ تاہم پولیس کے اعلی افسران مارک ڈرل اور مشق کے ذریعے ان کو بہتر بنانے کی کوشش کرتے ہیں ، لیکن اس میں بھی کچھ نہ کچھ ہو ہی جاتا ہے۔

Sep 11, 2015 05:30 PM IST | Updated on: Sep 11, 2015 05:30 PM IST
یہ ہے پوپی پولیس ، مارک ڈرل کے دوران داغنے تھے کہیں ،  داغ دئے کہیں اور آنسو گیس کے گولے

میرٹھ : یوپی پولیس سدھرنے کا نام نہیں لے رہی ہے ۔ تاہم پولیس کے اعلی افسران مارک ڈرل اور مشق کے ذریعے ان کو بہتر بنانے کی کوشش کرتے ہیں ، لیکن اس میں بھی کچھ نہ کچھ ہو ہی جاتا ہے۔

کچھ ایسا ہی جمعہ کو میرٹھ ضلع میں بھی ہوا ، جہاں فساد روکنے کے لئے مارک ڈرل کر رہے پولیس اہلکاروں نے آنسو گیس کے گولوں کو پاس ہی میں واقع لڑکیوں کے ہاسٹل میں پھینک دیا ، جس کی وجہ سے کئی طالبات بیمار ہو گئیں اور انہیں ٹراما سینٹر میں داخل کرایا گیا ۔ جہاں دو کی حالت نازک ہے۔

یہ واقعہ ضلع کے لالہ لاجپت رائے میموریل میڈیکل کالج میں پیش آیا ، جس کے احاطے میں ہی ایک پولیس چوکی ہے۔ اس پولیس چوکی میں آج فساد کنٹرول کے لئے مارک ڈرل کیا جارہا تھا ۔ اسی دوران پولیس اہلکاروں کو آنسو گیس کے گولے بھی داغنے تھے ، لیکن تھی تو یوپی پولیس ۔ نشانہ کہاں لگتا۔ گولے داغنے کہیں تھے اور داغ دئے قریب میں واقع لڑکیوں کے ہاسٹل میں۔ گولا گرتے ہی ہاسٹل میں کھلبلی مچ گئی۔ آنا فانا میں طالبات کو ٹراما سینٹر میں داخل کرایا گیا۔

ادھر میرٹھ پولیس نے تسلیم کیا کہ ان سے چوک ہوئی ہے لیکن کسی بھی طرح کے کارروائی کی بات نہیں کی ۔ دوسری طرف میڈیکل کالج انتظامیہ نے کہا ہے کہ وہ اس واقعہ کے خلاف شکایت کریں گے۔

Loading...

Loading...