ہوم » نیوز » No Category

دہشت گردوں نے 3 گھنٹے پہلے پیدا ہوئی نومولود بچی کو ماری دوگولیاں، پھر بھی بچ گئ جان

بتایا جاتا ہے کہ ISIS سے تعلق رکھنے والے تین دہشت گردوں نے اسپتال پر حملہ بولاتھا۔ کابل کے میٹرنٹی اسپتال میں گھستے ہی دہشت گردوں نے بم اور گولیاں چلانی شروع کردی۔ دہشت گردوں نے پولیس فورس کی وردی پہن رکھی تھی۔ ہینڈ گرینیڈس اور فائرنگ سے پورا علاقہ دہل گیا۔ چاروں طرف چیخ اور پکار مچ گئی۔

  • Share this:
دہشت گردوں نے 3 گھنٹے پہلے پیدا ہوئی نومولود بچی کو ماری دوگولیاں، پھر بھی بچ گئ جان
بتایا جاتا ہے کہ ISIS سے تعلق رکھنے والے تین دہشت گردوں نے اسپتال پر حملہ بولاتھا۔ کابل کے میٹرنٹی اسپتال میں گھستے ہی دہشت گردوں نے بم اور گولیاں چلانی شروع کردی۔ دہشت گردوں نے پولیس فورس کی وردی پہن رکھی تھی۔ ہینڈ گرینیڈس اور فائرنگ سے پورا علاقہ دہل گیا۔ چاروں طرف چیخ اور پکار مچ گئی۔

کابل: دنیا میں کچھ کرشمے ایسے ہوتے ہیں جس کے بارے میں سن کر اللہ پر یقین اور پختہ ہوجاتا ہے۔ کچھ ایسا ہی معاملہ افغانستان (Afghanistan) میں ہوا ہے۔ یہاں دہشت گردوں (terrorist) نے ایک نومولود بچی کو دو مرتبہ گولیاں ماریں لیکن صرف تین گھنٹے پہلے پیدا ہوئی بچی(New Born Baby) پھر بھی بچ گئی۔ یہ اپنے آپ میں انوکھا معاملہ ہے۔

ایک طرف دہشت گردوں کی بے رحمی کہ انہوں نے تین گھنٹے پہلے پیدا ہوئی بچی پر بھی رحم نہیں کیا اور اس پر دو مرتبہ گولیاں چلائیں اور دوسری طرف خدا کا کرشمہ دو گولیاں کھانے کے بعد بھی بچی بچ گئی۔

ڈیلی میل کی ایک رپورٹ کے مطابق افغانستان میں کابل کے میٹیرنٹی اسپتال میں کچھ دہشت گردوں نےحملہ کردیا تھا۔ اس حملے میں کل 24 لوگ مارے گئے۔ اس میں بچوں کی مائیں، نرس اور دو نوزائیدہ بچے بھی شامل ہیں۔ لیکن ایک نومولد بچی دو گولیاں کھانے کے بعد بھی بچ گئی حالانکہ دکھ کی بات یہ ہے کہ اس بچی کی ماں اس حملے میں ماری گئی۔

بتایا جاتا ہے کہ ISIS سے تعلق رکھنے والے تین دہشت گردوں نے اسپتال پر حملہ بولاتھا۔ کابل کے میٹرنٹی اسپتال میں گھستے ہی دہشت گردوں نے بم اور گولیاں چلانی شروع کردی۔ دہشت گردوں نے پولیس فورس کی وردی پہن رکھی تھی۔ ہینڈ گرینیڈس اور فائرنگ سے پورا علاقہ دہل گیا۔ چاروں طرف چیخ اور پکار مچ گئی۔

اس حملے کی زد میں تین گھنٹے پہلے پیدا ہوئی ایک بچی بھی آگئی۔ نومولود بچی کے پاؤں میں دو گولیاں لگیں۔ حملے میں 24 لوگ مارے گئے اور بچی کے ساتھ تقریبا 15 لوگ زخمی ہوئے۔ بعد میں سبھی دہشت گرد بھی مار گرائے گئے۔

نوزائیدہ بچی کا ڈاکٹروں نے آپریشن کیا۔ دو گولی لگنے سے بچی کا داہنا پاؤں بری طرح سے زخمی ہوگیاتھا۔ لیکن تین گھنٹے پہلے پیدا ہوئی بچی کو ڈاکٹروں نے بچالیا۔ حالانکہ اس کی ماں اس حملے میں ماری گئی۔
نومولود بچی کابل کے اندرا گاندھی چلڈرین اسپتال میں داخل کروایا گیا ہے۔ بچی کی ماں نازیہ کا اس حملے انتقال ہوگیا۔ غمزدہ والد ریف اللہ نے اپنی بچی کو ماں کا نام دیا ہے۔ والد نے اس کا نام نازیہ ہی رکھا ہے۔
First published: May 16, 2020 02:22 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading