الہ آباد ہائی کورٹ سے سی ایم یوگی کو راحت،2007فسادات میں کیس چلانے کی عرضی خارج

الہ آباد ہائی کورٹ نے جمعہ کو وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ کو بڑی راحت دیتے ہوئے 2007میں گورکھپور میں فساد معاملے میں داخل ہوئی عرضی کو خارج کر دیا۔راشد خان کی جانب سے داخل عرضی میں یوگی پر مزار میں توڑپھوڑ کیلئے بھڑکانے کاالزام لگاتے ہوئے مقدمہ چلانے کا مطالبہ کیا گیا تھا۔بتادیں کہ22دسمبرکو جسٹس وی کے نارائن کی ایک رکنی بنچ نے راشد خان کی عرضی پر بحث کے بعد فیصلہ محفوظ کرلیا تھا۔

Feb 01, 2018 05:51 PM IST | Updated on: Feb 01, 2018 05:51 PM IST
الہ آباد ہائی کورٹ سے سی ایم یوگی کو راحت،2007فسادات میں کیس چلانے کی عرضی خارج

الہ آباد ہائی کورٹ نے سی ایم یوگی کو دی راحت

الہ آباد۔الہ آباد ہائی کورٹ نے جمعہ کو وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ کو بڑی راحت دیتے ہوئے 2007میں گورکھپور میں فساد معاملے میں داخل ہوئی عرضی کو خارج کر دیا۔راشد خان کی جانب سے داخل عرضی میں یوگی پر مزار میں توڑپھوڑ کیلئے بھڑکانے کاالزام لگاتے ہوئے مقدمہ چلانے کا مطالبہ کیا گیا تھا۔بتادیں کہ22دسمبرکو جسٹس وی کے نارائن کی ایک رکنی بنچ نے راشد خان کی عرضی پر بحث کے بعد فیصلہ محفوظ کرلیا تھا۔

ریاستی حکومت کی جانب سے ایڈوکیٹ جنرل راگھوندر سنگھ نے عرضی پر اعتراض جتاتے ہوئے کہا کہ پولیس کی چارج شیٹ داخل ہونے کے بعد شکایت کرنے والے کا کوئی حق نہیں ہے۔

غورطلب ہیکہ سال 2007میں فساد کے دوران ان کے بھڑکانے پر مزار میں توڑ پھوڑ کرنے کے الزام میں اےسی جے ایم نے چارج شیٹ پر نوٹس لیا تھا۔اس حکم کو جج نے رد کر دیا تھا۔جسے عرضی میں چیلنج دیا گیا۔

Loading...

اس سے پہلے گورکھپور فساد کے معاملے میں سی ایم یوگی سمیت کئی دیگر کے خلاف فساد بھڑکانے کے معاملے میں درج مقدمہ میں ریاستی حکومت کی جانب سے مقدمہ چلائے جانے کی اجازت نہ دینے کو چیلنج دینے والی عرضی پر بھی کورٹ فیصلہ محفوظ کر چکی ہے۔

Loading...