کپواڑہ کے کیرن سیکٹر میں دراندازی کی بڑی کوشش ناکام، 5بھاری مسلح جنگجو ہلاک

ری نگر: فوج نے شمالی کشمیر کے سرحدی ضلع کپواڑہ میں لائن آف کنٹرول (ایل او سی) کے کیرن سیکٹر میں دراندازی کی ایک بڑی کوشش کو ناکام بنانے کے دوران پانچ بھاری مسلح جنگجوؤں کو ہلاک کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔

Jun 10, 2018 11:17 AM IST | Updated on: Jun 10, 2018 11:18 AM IST
کپواڑہ کے کیرن سیکٹر میں دراندازی کی بڑی کوشش ناکام، 5بھاری مسلح جنگجو ہلاک

سری نگر:  فوج نے شمالی کشمیر کے سرحدی ضلع کپواڑہ میں لائن آف کنٹرول (ایل او سی) کے کیرن سیکٹر میں دراندازی کی ایک بڑی کوشش کو ناکام بنانے کے دوران پانچ بھاری مسلح جنگجوؤں کو ہلاک کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔ فوج کا کہنا ہے کہ مارے گئے جنگجو بظاہر غیرملکی ہیں۔ فوج کی چنار کور نے اپنے آفیشل ٹویٹر اکاؤنٹ پر ایک ٹویٹ میں کہا ’بھارتی فوج نے کیرن سیکٹر میں دراندازی کی ایک بڑی کوشش کو ناکام بنادیا۔ اس میں پانچ جنگجوؤں کو ہلاک کیا گیا۔ مارے گئے سبھی پانچ جنگجوؤں کی لاشیں برآمد کی گئی ہیں۔

علاقہ میں آپریشن جاری ہے‘۔ دفاعی ترجمان کرنل راجیش کالیا نے یو این آئی کو بتایا کہ کپواڑہ میں ایل او سی کے کیرن سیکٹر میں تعینات بھارتی فوجی کے اہلکاروں نے گزشتہ رات جنگجوؤں کے ایک گروپ کو اندھیرے کا فائدہ اٹھاتے ہوئے پاکستان زیر قبضہ کشمیر سے سرحد کے اس پار داخل ہونے کی کوشش کرتے ہوئے دیکھا۔ انہوں نے بتایا ’فوجیوں نے دراندازوں کو للکارا اور خودسپردگی اختیار کرنے کے لئے کہا، لیکن انہوں نے ایسا کرنے کے بجائے اندھا دھند فائرنگ شروع کی‘۔

Loading...

دفاعی ترجمان نے بتایا کہ فوج کی جوابی فائرنگ کے بعد طرفین کے مابین تصادم شروع ہوا جس میں پانچ بھاری مسلح جنگجوؤں کو ہلاک کیا گیا۔ انہوں نے بتایا ’تصادم میں اب تک پانچ جنگجوؤں کو ہلاک کیا جاچکا ہے۔ علاقہ کو محاصرے میں لیکر وسیع تلاشی آپریشن شروع کیا گیا ہے‘۔

شمالی کشمیر کے ضلع کپواڑہ میں گذشتہ دو ہفتوں کے دوران دراندازی کی قریب تین کوششیں ناکام بنائی گئیں جن میں قریب دس جنگجوؤں کو ہلاک کیا گیا۔ فوج کے ایک سینئر عہدیدار کے مطابق شمالی کشمیر میں لائن آف کنٹرول کے دوسری طرف پاکستان زیر قبضہ کشمیر میں جنگجوؤں کے کئی گروپ سرحد کے اس پار دراندازی کرنے کے انتظار میں بیٹھے ہوئے ہیں۔

شکتی وجے بریگیڈ ٹنگڈار کے بریگیڈیئر پی کے مشرا نے یہ بات 27 مئی کو ٹنگڈار سیکٹرمیں ناکام بنائی گئی دراندازی کی کوشش کے بارے میں میڈیا کو بریف کرتے ہوئے کہی تھی۔ انہوں نے کہا تھا ’ہماری اطلاعات کے مطابق سرحد کے دوسری طرف کئی لانچنگ پیڈس موجود ہیں۔ انٹیلی جنس اطلاعات کے مطابق کئی ایک گروپ سرحد کے اس پار دراندازی کرنے کا انتظار کررہے ہیں‘۔ انہوں نے کہا تھا کہ ایل او سی پر تعینات فوجی اہلکار دراندازی کی کسی بھی کوشش کو ناکام بنانے کے لئے تیار ہیں۔ انہوں نے کہا تھا ’ہم چوکنا ہیں۔ ہم دراندازی کی کسی بھی کوشش کو ناکام بناسکتے ہیں‘۔

Loading...