جب جوانوں کے سر کاٹ کر لے گئے ، تب بی جے پی نے حمایت واپس کیوں نہیں لیا : اعظم خان

سماج وادی پارٹی کے سینئر لیڈر اور سابق کابینی وزیر محمد اعظم خان نے کشمیر میں پی ڈی پی - بی جے پی اتحاد ٹوٹنے کو موقع پرستی قرار دیا۔

Jun 20, 2018 02:38 PM IST | Updated on: Jun 20, 2018 02:38 PM IST
جب جوانوں کے سر کاٹ کر لے گئے ، تب بی جے پی نے حمایت واپس کیوں نہیں لیا : اعظم خان

اعظم خان ۔ فائل فوٹو

سماج وادی پارٹی کے سینئر لیڈر اور سابق کابینی وزیر محمد اعظم خان نے کشمیر میں پی ڈی پی - بی جے پی اتحاد ٹوٹنے کو موقع پرستی قرار دیتے ہوئے کہا کہ جب جوانوں کے سر کاٹ کر لے گئے ، تب بی جے پی نے کیوں حمایت واپس لیا ۔ غور طلب ہے کہ منگل کو بی جے پی نے جموں و کشمیر حکومت سے اپنی حمایت واپس لینے کا اعلان کیا تھا ، جس کے بعد محبوبہ مفتی کی حکومت گرگئی اور اب وہاں گورنر راج نافذ کردیا گیا ہے۔

بقول اعظم خان آئندہ لوک سبھا الیکشن تک بی جے پی کو ساتھ رہنا چاہئے تھا ۔ حمایت واپسی کا یہ صحیح وقت نہیں تھا ، بی جے پی والوں نے تین سالوں تک کشمیر میں خوب موج مستی کی اور اب جب لوک سبھا الیکشن میں چھ مہینے ہی ہیں تو لوگوں کو دھوکہ دینے کیلئے انہیں دیش بھکتی یا د آگئی۔

کشمیر میں فوج کے ذریعہ پتھراو کرنے والوں نمٹنے کیلئے ان کے ساتھیوں کو ہی ڈھال بنائے جانے کے سوال پر اعظم خان نے کہا کہ مرکز اور ریاست میں حکومت بی جے پی کی تھی ، تو شکایت کس سے کر رہے ہیں ۔

Loading...

Loading...