کیپٹن امریندرسنگھ نے پاکستان کو سخت وارننگ دیتے ہوئے کہا 'جنرل باجوہ توجانتا نہیں ہم بھی پنجابی ہیں'۔

امریندرسنگھ حکومت نے پنجاب اسمبلی میں ایک تجویزبھی منظورکی ہے کہ اب پاکستان سے بات چیت نہیں ہونی چاہئے اورکارروائی ہونی چاہئے۔

Feb 15, 2019 05:56 PM IST | Updated on: Feb 15, 2019 05:56 PM IST
کیپٹن امریندرسنگھ نے پاکستان کو سخت وارننگ دیتے ہوئے کہا 'جنرل باجوہ توجانتا نہیں ہم بھی پنجابی ہیں'۔

پنجاب کے وزیراعلیٰ کیپٹن امریندر سنگھ نے پاکستان کے آرمی چیف قمر باجوا کو دی سخت وارننگ۔

جموں وکشمیرکے پلوامہ میں ہوئے دہشت گردانہ حملے کے بعد پنجاب کے وزیراعلیٰ کیپٹن امریندرسنگھ نے پاکستان کوچیلنج کیا ہے۔ کیپٹن امریندرسنگھ نے پاکستان آرمی کے چیف جنرل قمرجاوید باجوہ کوللکارا۔ انہوں نے پنجاب اسمبلی میں کہا کہ حملے کے لئے جنرل باجوہ ذمہ دارہے۔ باجوہ توپنجابی ہے تومیں بھی پنجابی ہوں، تو پنجاب میں آکے دکھا۔

اتنا ہی نہیں وزیراعلیٰ کیپٹن امریندرسنگھ نے مزید کہا کہ جنرل قمرباجوہ توجانتا نہیں ہم بھی پنجابی ہیں۔ اس کے ساتھ ہی اتفاق رائے سے ایوان کوملتوی کردیا گیا۔ اس دوران امریندرسنگھ نے ایک تجویزبھی منظورکی کہ اب پاکستان سے بات چیت نہیں ہونی چاہئےاورکارروائی ہونی چاہئے۔ یہ تجویزاتفاق رائے سے پنجاب اسمبلی میں منظورکی گئی ہے۔

Loading...

کیپٹن امریندرسنگھ نےکہا 'ہم چاہتے ہیں کہ مرکزی حکومت اس طرح کے موضوعات پرسختی سےنمٹے۔ پاکستان نے ہی یہ سب کچھ کیا ہے۔ جنرل قمر جاوید باجوہ سمجھ جائے کہ ہم بھی پنجابی ہیں۔ کرتارپورکاریڈورایک الگ موضوع ہے اورکرتارپورکاریڈورپوری طرح سے محفوظ ہے۔ مجھے نہیں لگتا کہ اس سے کرتارپورکاریڈورکوکوئی فرق پڑے گا۔ انہوں نے کہا کہ انٹلی جنس ناکامی کولےکرابھی کچھ بھی نہیں کہا جاسکتا۔

Loading...