اولمپک جانے سے قبل گاؤں کی سڑک پر چھلكا شوٹر کا درد

چین سنگھ کی تصویر کے ساتھ ایک کیپشن سوشل میڈیا پر خوب شیئر کیا جا رہا ہے ۔ اس میں لکھا ہے کہ اگر میں گولڈ میڈل جیت جاتا ہوں ، تو وزیر اعظم کو اپنے گاؤں آنے کے لئے کہوں گا ۔ شاید اس وقت انتظامیہ گاؤں میں ایک سڑک بنانے کے لئے مجبور ہو جائے

Jul 21, 2016 10:15 AM IST | Updated on: Jul 21, 2016 10:15 AM IST
اولمپک جانے سے قبل گاؤں کی سڑک پر چھلكا شوٹر کا درد

نئی دہلی : اولمپکس میں ہندوستان کی نمائندگی کرنے والے شوٹر چین سنگھ نے ملک کے اس مسئلہ کی طرف حکومت کی توجہ مبذول کرائی ہے ، جو آزادی کے 65 سال بعد بھی موجود ہے ۔ چین سنگھ کی تصویر کے ساتھ ایک کیپشن سوشل میڈیا پر خوب شیئر کیا جا رہا ہے ۔ اس میں لکھا ہے کہ اگر میں گولڈ میڈل جیت جاتا ہوں ، تو وزیر اعظم کو اپنے گاؤں آنے کے لئے کہوں گا ۔ شاید اس وقت انتظامیہ گاؤں میں ایک سڑک بنانے کے لئے مجبور ہو جائے ۔

چین سنگھ ڈوڈہ کے رہنے والے ہیں اور یہ علاقہ مرکزی وزیر جتیندر سنگھ کی پارلیمانی سیٹ کے تحت آتا ہے ۔ جتیندر سنگھ نے چین سنگھ کی اس تصویر کو اپنے ٹوئٹر ہینڈل سے شیئر کیا ہے ۔ انہوں نے وزارت کھیل سے درخواست کی ہے کہ چین سنگھ کو ہر طرح کی مدد فراہم کرائی جائے ۔

Loading...

خیال رہے کہ ہندوستانی فوج کے اس 26 سالہ صوبیدار سے پورے ملک کو ریو اولمپکس میں کافی امیدیں ہیں ۔ چین سنگھ آرمی مارك مین شپ یونٹ کے زیر نگرانی عالمی سطح کے کوچز سے شوٹنگ سیکھی ہے ۔ اے ایم یو نے ہندوستان کو متعدد شوٹر دئے ہیں ۔ سنگھ کو کبھی ہار نہ ماننے والا کھلاڑی سمجھا جاتا ہے ۔ جب تک وہ اپنے مقصد کو حاصل نہیں کر لیتے ہیں ، اس وقت تک وہ اپنے پاؤں پیچھے نہیں کھینچتے ہیں ۔

سال 2014 میں ایشین چیمپئن شپ جو کویت میں ہوا تھا ، وہاں چین نے 10 میٹر ایئر رائفل کے ایونٹ میں گولڈ میڈل جیتا تھا ۔ اس کے علاوہ دہلی میں ایشین شوٹنگ چیمپئن شپ میں بھی چین نے گولڈ میڈل  جیتا تھا ۔  انہوں نے اپنے اے ایم یو ساتھیوں کی طرح ہی کمال کا مظاہرہ کیا تھا ۔

Loading...