ہریانہ : خواتین باکسروں نے واپس کی کھٹر سرکار سے تحفہ میں ملی گائیں ، فائدہ کی جگہ ہورہا ہے نقصان

ہریانہ حکومت نے گزشتہ سال نومبر میں نیشنل چمپئن شپ میں کامیاب ہونے والی جن چھ خواتین باکسروں کو تحفہ میں گائے دی تھی ، ان میں سے تین باکسروں نے اپنی گائیں واپس کردی ہیں ۔

Jan 06, 2018 08:29 PM IST | Updated on: Jan 06, 2018 08:29 PM IST
ہریانہ : خواتین باکسروں نے واپس کی کھٹر سرکار سے تحفہ میں ملی گائیں ، فائدہ کی جگہ ہورہا ہے نقصان

ہریانہ کے چمپئن باکسرس ۔ فائل فوٹو

چندی گڑھ : ہریانہ حکومت نے گزشتہ سال نومبر میں نیشنل چمپئن شپ میں کامیاب ہونے والی جن چھ خواتین باکسروں کو تحفہ میں گائے دی تھی ، ان میں سے تین باکسروں نے اپنی گائیں واپس کردی ہیں ۔ رپورٹس کے مطابق باکسروں کا کہنا ہے کہ گائیں اب دودھ نہیں دے رہی ہیں اور انہیں نقصان پہنچ رہا ہے ۔ وہ اہل خانہ پر حملہ بھی کرتی ہیں ۔

خیال رہے کہ ریاست کے مویشی پروری کے وزیر اوم پرکاش دھنکر نے گزشتہ سال اعلان کیا تھا کہ ریاستی حکومت کھیل میں کامیابی حاصل کرنے والوں کو انعام میں گائے دے گی ۔ اس دوران انہوں نے گائے کے فوائد کے بارے میں بتایا تھا ۔

رپورٹ کے مطابق دھنکر نے کہا تھا کہ گائے کے دودھ میں موٹاپا کم ہوتا ہے اور یہ باکسر کیلئے فائدہ مند ہوتا ہے ۔ گائے کافی ایکٹو ہوتی ہے جبکہ بھینس دن بھر سوتی رہتی ہے ۔ باکسر نے ملک کا نام اونچا کیا ہے اور ہم چاہتے ہیں کہ وہ آگے بڑھیں ۔ اس کے بعد انہوں نے اے آئی بی اے ورلڈ یوتھ چمپئن شپ میڈلسٹوں کو تحفہ میں گائے دیا تھا۔

Loading...

Loading...