ہریانہ حکومت کو نہیں چاہئے کھلاڑیوں کی کمائی کا حصہ، وزیراعلیٰ کھٹرنے فیصلے پرروک لگائی

ہریانہ حکومت کے ذریعہ کھلاڑیوں کی کمائی کا حصہ مانگنے کے فیصلے پر وزیراعلیٰ منوہر لال کھٹر نے روک لگادی ہے۔

Jun 08, 2018 06:44 PM IST | Updated on: Jun 08, 2018 06:46 PM IST
ہریانہ حکومت کو نہیں چاہئے کھلاڑیوں کی کمائی کا حصہ، وزیراعلیٰ کھٹرنے فیصلے پرروک لگائی

چنڈی گڑھ: ہریانہ حکومت کے ذریعہ کھلاڑیوں کی کمائی کا حصہ مانگنے کے فیصلے پر وزیراعلیٰ منوہر لال کھٹر نے روک لگادی ہے۔ وزیراعلیٰ نے ٹوئٹ کرکے اس کی اطلاع دی ہے۔ ٹوئٹر میں وزیراعلیٰ نے لکھا ہے کہ اس معاملے میں 30 اپریل کو جاری کی گئی نوٹیفکیشن کی فائل میں نے طلب کی ہے اور ابھی اس فیصلے پر روک لگادی گئی ہے۔

انہوں نے آگے لکھا ہے کہ انہیں ہریانہ کے کھلاڑیوں پر فخر ہے اور میں انہیں متاثر کرنے والے سبھی موضوعات پر غور کرنے کا یقین دلاتا ہوں۔دوسری جانب اس معاملے پر کھیمکا نے کہا کہ کھلاڑیوں کی محنت کو دیکھتے ہوئے حکومت نے نوکری دی۔ ایسے میں کھیلوں کو فروغ دینے کے لئے ان کھلاڑیوں کو پیشہ ور کمائی کا 33 فیصدی دینے میں کوئی گریز نہیں کرنا چاہئے۔

Loading...

واضح رہے کہ اپریل کو ہریانہ کھیل محکمہ کے پرنسپل سکریٹری اشوک کھیمکا کے ذریعہ منظور ایک نوٹیفکیشن جاری کی گئی ہے۔ اس نوٹیفکیشن کے مطابق پروفیشنل ٹورنامنٹوں میں حصہ لینے والے کھلاریوں کو اشتہار سے ہونے والی کمائی کا ایک تہائی حصہ ہریانہ اسپورٹس کونسل میں جمع کیا جائے گا۔ ان پیسوں کا استعمال کھیلوں کی ترقی کے لئے کی جائے گی، اس میں ریاستی حکومت کے ذریعہ نوکری پر رکھے گئے کھلاڑی بھی شامل ہیں۔

اس فیصلے سے قبل یوگیشور دتہ نے ٹوئٹ کرکے اشوک کھیکمکا پر نشانہ سادھا ہے۔ ٹوئٹر پر یوگیشور نے لکھا ہے کہ ایسے افسر سے رام بچائے، جب سے کھیل محکمہ میں آئے ہیں تب سے بغیر سرپیر کے تغلقی فرمان جاری کئے جارہے ہیں۔ ہریانہ کے کھیل ترقی میں آپ کا تعاون صفر ہے، لیکن یہ دعوی ہے میرا اس کی خرابی میں آپ صد فیصد کامیاب ہورہے ہیں۔ اب ہریانہ کے نئے کھلاڑی منتقلی کریں گے اور اس کے ذمہ دار آپ ہوں گے۔

Loading...