یوم وفات پر خاص : نواب شیفتہ سےدوستی اور شراب اورآم کا شوق مرزا غالب کے میرٹھ آنے کی رہی وجہ

مرزا اسد الله خاں غالب کا دہلی کےعلاوہ میرٹھ سے بھی خاص رشتہ رہا ہے۔ مرزا غالب کے میرٹھ دوروں کا تذکرہ قصہ کہانیوں میں یوں تو ان کے ایک خاص شوق کے حوالے ملتا ہے ، لیکن تاریخ کےحوالے سے مرزا غالب کا جو خاص رشتہ میرٹھ سے ہے

Feb 15, 2018 09:00 PM IST | Updated on: Feb 15, 2018 09:00 PM IST
یوم وفات پر خاص : نواب شیفتہ سےدوستی اور شراب اورآم کا شوق مرزا غالب کے میرٹھ آنے کی رہی وجہ

میرٹھ : مرزا اسد الله خاں غالب کا دہلی کےعلاوہ میرٹھ سے بھی خاص رشتہ رہا ہے۔ مرزا غالب کے میرٹھ دوروں کا تذکرہ قصہ کہانیوں میں یوں تو ان کے ایک خاص شوق کے حوالے ملتا ہے ، لیکن تاریخ کےحوالے سے مرزا غالب کا جو خاص رشتہ میرٹھ سے ہے وہ نواب محّد علی خاں شیفتہ سے ان کی دوستی کا ہے، جس کی وجہ سے مرزا میرٹھ آتے جاتے رہے ۔

مرزا غالب کی یادوں کو خود میں سمیٹے ہوئے میرٹھ شہر میں غالب کا ذکر آج تاریخ کے صفحات میں موجود ہے ۔ پرانے شہرمیں نواب شیفتہ کی کوٹھی تواب موجود نہیں ، لیکن اس کوٹھی میں نشستوں کے دور اور نواب شیفتہ سے مرزا کی دوستی کے قصّے آج بھی بزرگوں اور تاریخ کے جانکاروں کے ذہنوں میں محفوظ ہیں ۔

جانکاروں کے مطابق مرزا غالب کی 1857 میں تحریر کی ہوئی سرگزشتہ کا تعلق بھی میرٹھ سے ثابت ہوتا ہے ۔ غالب سے وابستہ نشانیوں پر آج میرٹھ میں نئی نئی عمارتیں ضرور تعمیر ہو چکی ہیں ، لیکن غالب کے نام سے منسوب کسی نشانی کے نہ ہونے پر لوگ افسوس کا اظہار کرتے ہیں۔ شعر و شاعری کی نسبت سے مرزا غالب کا تعلق میرٹھ سے خواہ کم رہا ہو لیکن شراب اور نواب سے دوستی کے رشتے سے غالب کا میرٹھ سے خاص تعلق رہا ۔

Loading...

Loading...