ہاپوڑموب لنچنگ: قاسم کے بھائی کوکچلنے کی کوشش، نامعلوم افراد کے خلاف مقدمہ درج

ایس ایس پی ویبھو کرشنا کے مطابق معاملہ درج کرکے جانچ ہڑتال کی جارہی ہے، جلدہی ملزمین کی گرفتاری کرلی جائے گی۔

Sep 01, 2018 03:42 PM IST | Updated on: Sep 01, 2018 03:43 PM IST
ہاپوڑموب لنچنگ: قاسم کے بھائی کوکچلنے کی کوشش، نامعلوم افراد کے خلاف مقدمہ درج

غازی آباد کے مسوری علاقے میں جمعہ کی دیر شام ہاپوڑ کے سرخیوں میں رہے موب لنچنگ معاملے کے اہم گواہ اور قاسم کے بھائی اور ان کے سیکورٹی اہلکاروں کو گاڑی سے کچلنے کی کوشش کی گئی ہے۔

اس حادثہ میں سیکورٹی گارڈ اور اہم مدعی قاسم کے بھائی بال بال بچ گئے۔ اس معاملے میں مسوری تھانے میں نامعلوم افراد کے خلاف مقدمہ درج کرایا گیا ہے۔ ایس ایس پی ویبھو کرشنا کے مطابق معاملہ درج کرکے جانچ ہڑتال کی جارہی ہے، جلد ہی ملزمین کی گرفتاری کرلی جائے گی۔

Loading...

اس معاملے میں قاسم کے بھائی نے پولیس میں شکایت درج کراتے ہوئے الزام لگایا ہے کہ وہ اپنے شہر سے غازی آبادکے مسوری سے ہوتے ہوئے ہاپوڑ جارہا تھا۔ اسی دوران نیشنل ہائی وے 24 پر ایک گاڑی نے سیکورٹی اہلکاروں اور قاسم کے بھائی کو کچلنے کی کوشش کی۔ ایس ایس پی غازی آباد ویبھو کرشنا نے کہا ہے کہ معاملہ درج کرکے جانچ پڑتال کی جارہی ہے، جلد ہی ملزمین کی گرفتاری کرلی جائے گی۔

واضح رہے کہ گزشگتہ جون مہینے میں ہاپوڑ سے موب لنچنگ کی دل دہلا دینے والی خبرسامنے آئی تھی، جس کا ایک ویڈیو بھی وائرل ہوا تھا۔ ویڈیو میں واضح طور پر دکھایا گیا تھا کہ بھیڑ نے ممنوعہ جانور کے قتل کے الزام میں دونوجوانوں کو جم کر پیٹا تھا، جس میں قاسم نام کے نوجوان کی موت ہوگئی تھی جبکہ دوسرے متاثر شخص کو زخمی حالت میں اسپتال میں داخل کرایا گیا تھا۔

Loading...