اب منوہر حکومت کے وزیر نے کیا علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کا نام بدلنے کا مطالبہ

علی گڑھ مسلم یونیورسٹی میں محمد علی جناح کی تصویر کو لیکر تنازع ابھی تھما نہیں تھا کہ ایک نیا تنازع پیدا ہو گیا ہے۔تنازع کا نیا نیا جن ہریانہ کے ریواڑی سے نکلا ہے اورعلی گڑھ مسلم یونیورسٹی کا نام بدلنے کا مطالبہ کیا جا رہا ہے ۔

May 15, 2018 05:31 PM IST | Updated on: May 15, 2018 05:31 PM IST
اب منوہر حکومت کے وزیر نے کیا علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کا نام بدلنے کا مطالبہ

منوہر لال کھٹر

علی گڑھ مسلم یونیورسٹی میں محمد علی جناح کی تصویر کو لیکر تنازع ابھی تھما نہیں تھا کہ ایک نیا تنازع پیدا ہو گیا ہے۔تنازع ک نیا جن ہریانہ کے ریواڑی سے نکلا ہے اورعلی گڑھ مسلم یونیورسٹی کا نام بدلنے کا مطالبہ کیا جا رہا ہے ۔یہ مانگ کوئی اور نہیں ہریانہ حکومت کے کابینی وزیر کیپٹن ابھیمنیو کر رہے ہیں۔کیپٹن  ابھیمنیو نے یونیورسٹی میں جناح کی تصویر لگانے کو غلط بتاتے ہوئے اے ایم یو کا نام بدلنے کامطالبہ کیا ہے۔کیپٹن ابھیمنیو کے مطابق ،کا نام مہیندر پرتاپ سنگھ کے نام پر ہونا چاہئے ۔کیپٹن ابھیمنیو کی اس مانگ کے پیچھے ان کی ایک دلیل بھی ہے۔

راجا مہیندر پرتاپ سنگھ نے دی تھی زمین

Loading...

کیپٹن کی مانیں تو راجا مہیندر پرتاپ سنگھ نے ہی اے ایم یو کیلئے زمین دی تھی۔کیپٹن نے کہا کہ راجا مہیندر سنگھ نے زمین دان میں دی تھی اور جو لوگ جناح کی تصویر کو لگانے کی حمایت کر رہے ہیں انہیں یہ معلوم نہیں ہوگا کہ اس یونیورسٹی کیلئے زیمن کس نے دی۔کیپٹن نے کہا کہ یونیورسٹی کیلئے زمین راجا مہیندر سنگھ نے دی تھی اس لئے یونیورسٹی کا نام بدل کر راجا مہیندر سنگھ کے نام پر ہونا چاہئے۔

جاٹ دھرم شالا کے بھومی پوجن پروگرام میں پہنچے تھے وزیر خزانہ

در اصل اتوار کو ریواٹی میں جاٹ دھرم شالا بھون کا بھومی پوجن پروگرام کا انعقاد کیا گیا تھا۔جس میں وزیر خزانی کیپٹن ابھیمنیو شامل ہوئے اور اجلاس کو خطاب کیا ۔اجلاس کو خطاب کوتے ہوئے وزیر خزانہ نے جناح کی تصویر پر بیان دیکر مسئلے کو پھر سے اٹھا دیا۔

Loading...