اترپردیش: بیٹی پیدا ہونے پر ناراض شوہر نے بیوی کو دیا تین طلاق

تازہ ترین معاملہ اتر پردیش کے شاملی کا ہے جہاں ایک مسلم عورت کو اس کے شوہر نے صرف اس وجہ سے تین طلاق دے دی کیونکہ اس نے بیٹی کو جنم دیا تھا۔

Jul 16, 2018 10:50 AM IST | Updated on: Jul 16, 2018 10:51 AM IST
اترپردیش: بیٹی پیدا ہونے پر ناراض شوہر نے بیوی کو دیا تین طلاق

خاتون نے پولیس میں شکایت درج کراتے ہوئے بتایا کہ جب سے اس نے بیٹی کو جنم دیا ہے تبھی سے اس کا شوہر اس کے ساتھ غلط سلوک کر رہا ہے۔

سپریم کورٹ کے تین طلاق کو غیر قانونی قرار دینے کے باوجود تین طلاق کے معاملات رک نہیں رہے ہیں۔ تازہ ترین معاملہ اتر پردیش کے شاملی کا ہے جہاں ایک مسلم عورت کو اس کے شوہر نے صرف اس وجہ سے تین طلاق دے دی کیونکہ اس نے بیٹی کو جنم دیا تھا۔

نیوز ایجنسی اے این آئی کے مطابق، متاثرہ خاتون نے حال ہی میں ایک بیٹی کو جنم دیا تھا جس کے بعد سے اس کا شوہر ہر روز اسے مارتا اور پیٹتا تھا۔

Loading...

خاتون نے پولیس میں شکایت درج کراتے ہوئے بتایا کہ جب سے اس نے بیٹی کو جنم دیا ہے تبھی سے اس کا شوہر اس کے ساتھ غلط سلوک کر رہا ہے۔ خاتون نے الزام لگایا کہ اس کا شوہر اس سے جہیز اور بائک کی بھی مانگ کرتا ہے۔

اے ایس پی شلوک کمار نے کہا کہ پولیس نے مقدمہ درج کر لیا ہے اور اس کی تحقیقات شروع کردی ہے۔ بتا دیں کہ گزشتہ سال اگست میں مرکزی حکومت 3 طلاق کو قابل سزا جرم بنانے کے لئے ایک بل لے کر آئی تھی۔ لوک سبھا نے اس بل کو اکثریت سے پاس کر دیا تھا اور اب یہ راجیہ سبھا میں زیر التواء ہے۔

قانون بن جانے کے بعد 3 طلاق غیر قانونی ہو گی جس میں تین سال تک کی قید کی سزا اور جرمانہ کا التزام ہے۔

Loading...