بی ایس پی صدر مایاوتی نے ایک بار پھر اٹھائے ای وی ایم پر سوال

لکھنؤ۔ بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) کی صدر مایاوتی نے ایک بار پھر الیکٹرانک ووٹنگ مشین (ای وی ایم) پر سوال کھڑا کرتے ہوئے آج کہا کہ اگر ووٹ سے الیکشن کرائے جاتے تو ان کی پارٹی کے اوربھی میئر جیتتے۔

Dec 02, 2017 05:31 PM IST | Updated on: Dec 02, 2017 05:31 PM IST
بی ایس پی صدر مایاوتی نے ایک بار پھر اٹھائے ای وی ایم پر سوال

بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) کی صدر مایاوتی

لکھنؤ۔ بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) کی صدر مایاوتی نے ایک بار پھر الیکٹرانک ووٹنگ مشین (ای وی ایم) پر سوال کھڑا کرتے ہوئے آج کہا کہ اگر ووٹ سے الیکشن کرائے جاتے تو ان کی پارٹی کے اوربھی میئر جیتتے۔ محترمہ مایاوتی نے آج یہاں کہا کہ بی جے پی نے سرکاری مشینری کا جم کر غلط استعمال کیا، نہیں تو ان کی پارٹی کے اور میئر جیتتے۔ کل 16 شہر کارپوریشنز میں بی جے پی کے 14 اور بی ایس پی کے دو میئر جیتے ہیں۔

انہوں نے بی جے پی کو ووٹ سے الیکشن کرانے کا چیلنج کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ بی جے پی کو جمہوریت میں بھروسہ ہے تو اسے سال 2019 میں ہونے والے لوک سبھا انتخابات میں ای وی ایم کی بجائے ووٹ سے کرانے کی پہل کرنی چاہئے۔ بی ایس پی صدر نے کہا کہ ان کی پارٹی ’سرو سماج ‘سے اتحاد کرنا چاہتی ہے۔ اس میں ہر ذات خاص طور پر قبائلیوں، پچھڑوں، دلتوں کی بات ہو۔اس سے پہلے انہوں نے ڈاکٹر بھیم راؤ امبیڈکر کو بودھ مت کی تعلیم دینے والے بودھ بھکشو پرگیانند کو خراج عقیدت پیش کیا۔

واضح رہے کہ بودھ مت کے راہب پرگیانند کا 30 نومبر کو طویل علالت کے بعد انتقال ہو گیا تھا۔ وہ 90 سال کے تھے۔ 26 نومبر کو ان کوسنگین حالت میں لکھنؤ کے کنگ جارج میڈیکل یونیورسٹی (كےجي ایم یو) میں داخل کرایا گیا تھا۔

Loading...

Loading...