مایاوتی کا مہاگٹھ بندھن کو جھٹکا، کہا- قابل احترام تعداد میں سیٹیں نہیں تو اکیلے لڑیں گے الیکشن

مایاوتی نے کہا کہ ہماری پارٹی کسی بھی پارٹی کے ساتھ تبھی کوئی اتحاد کرے گی جب اسے قابل احترام نشستیں ملیں گی۔

Sep 17, 2018 10:18 AM IST | Updated on: Sep 17, 2018 10:18 AM IST
مایاوتی کا مہاگٹھ بندھن کو جھٹکا، کہا- قابل احترام تعداد میں سیٹیں نہیں تو اکیلے لڑیں گے الیکشن

سونیا گاندھی، مایاوتی اور راہل گاندھی خوشگوار موڈ میں: فائل فوٹو۔

بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) صدر مایاوتی نے لوک سبھا انتخابات میں اتحاد کی وکالت کر رہی اپوزیشن جماعتوں کو صاف پیغام دیتے ہوئے کہا کہ ان کی پارٹی صرف قابل احترام تعداد میں سیٹیں ملنے پر ہی کسی پارٹی کے ساتھ اتحاد کرے گی، ورنہ وہ اکیلے ہی انتخابی میدان میں اترے گی۔

مایاوتی نے کہا، 'لوک سبھا انتخابات اور اس سے پہلے کچھ ریاستوں میں ہونے والے اسمبلی انتخابات میں اپوزیشن جماعتوں کی یہ کوشش ہوگی کہ بی جے پی کو کسی بھی قیمت پر اقتدار میں آنے سے روکا جائے۔ اس کے لئے گٹھ بندھن کر کے الیکشن لڑنے کی بات بھی ہو رہی ہے۔ " انہوں نے کہا، 'ہماری پارٹی اتحاد کے خلاف نہیں ہے، لیکن اس کے بارے میں پارٹی کا شروع سے ہی واضح رخ ہے۔ پارٹی کسی بھی پارٹی کے ساتھ تبھی کوئی اتحاد کرے گی جب اسے قابل احترام نشستیں ملیں گی۔ ورنہ ہماری پارٹی اکیلے ہی الیکشن لڑنا بہتر سمجھتی ہے۔

Loading...

لوک سبھا انتخابات سے پہلے مہاگٹھ بندھن بنانے کے لئے کوششیں جاری ہیں۔ مانا جا رہا ہے کہ دلتوں پر گرفت رکھنے کی وجہ سے اس میں بی ایس پی کا اہم کردار ہو سکتا ہے۔ ایس پی صدر اکھلیش یادو بی ایس پی کے ساتھ اتحاد کی خواہش تقریبا ہر پلیٹ فارم سے ظاہر کرتے رہے ہیں۔

Loading...