پی ڈی پی اور بی جے پی نے جموں وکشمیر کو تباہی کے دہانے پرپہنچا دیا: عمر عبداللہ

نیشنل کانفرنس کے صدر عمر عبداللہ نے کہاکہ 2015 میں پی ڈی پی اور بی جے پی اتحاد کو صاف و شفاف اور پُرسکون ماحول میں حکومت تفویض کی لیکن بدقسمتی سے ان دونوں جماعتوں نے ریاست کو تباہی اور بربادی کے دہانے پر لاکھڑا کردیا۔

May 07, 2018 09:49 PM IST | Updated on: May 07, 2018 09:49 PM IST
پی ڈی پی اور بی جے پی نے جموں وکشمیر کو تباہی کے دہانے پرپہنچا دیا: عمر عبداللہ

کارگل: نیشنل کانفرنس کے کارگذار صدر عمر عبداللہ نے وادی کشمیر کی بقول اُن کے موجودہ مخدوش اور انتہائی تشویشناک صورتحال کو پی ڈی پی بی جے پی حکومت کی عوام کُش اور نوجوانوں کو پشت بہ دیوار کرنے کی پالیسیوں کا نتیجہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ ہم نے 2015میں پی ڈی پی اور بھاجپا اتحاد کو صاف و شفاف اور پُرسکون ماحول میں حکومت تفویض کی لیکن بدقسمتی سے ان دونوں جماعتوں نے ریاست کو تباہی اور بربادی کے دہانے پر لاکھڑا کردیا۔

ایجنڈا آف الائنس ایک بہت بڑا فریب ثابت ہوا اور لوگوں کے خلاف غیر اعلانیہ جنگ چھڑ کر نوجوانوں کو پشت از دیوار کرنے کے تمام حربے اپنائے گئے۔ عمر عبداللہ نے ان باتوں کا اظہار پیر کے روز اپنے دورہ لداخ کے دوسرے روز کرگل میں عوامی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے جنگجویت کے بڑھتے ہوئے رجحان کو موجودہ حکومت کی نوجوان کُش پالیسیوں کا نتیجہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ جنوبی کشمیر میں شروع ہوا یہ سلسلہ شمالی کشمیر اور وسطی کشمیر تک پہنچ گیا ہے۔

Loading...

انہوں نے کہا کہ پڑھے لکھے اور نوکری یافتہ نوجوانوں جنگجوؤں کی صفوں میں شامل ہورہے ہیں اور یہ سلسلہ تشویشناک حد تک اضافہ کرگیاہے، کل ہی سری نگر سے متعدد نوجوانوں کے غائب ہونے کی خبریں موصول ہورہی ہیں اور خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے کہ یہ نوجوانوں بھی جنگجوؤں کی صف میں شامل ہوگئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ نوجوانوں کو جنگجوؤں کی صفوں شامل ہونے سے روکنے کے لئے بات چیت اور افہام و تفہیم کا راستہ اختیار کرنا انتہائی ناگزیر بن گیا ہے۔

Loading...