عید میلادالنبی کی چھٹی رد کرنے کے یوگی حکومت کے فیصلے کو الہ آباد ہائی میں کیا گیا چیلنج ، اگلی سماعت 12 جولائی کو

الہ آباد ہائی کورٹ نے ریاستی حکومت سے اس نوٹیفکیشن کی نقل طلب کی ہے جس کے ذریعہ مسلمانوں کو عیدمیلاالنبی کی عام تعطیل کو ختم کردیا گیا ہے۔

May 12, 2017 07:20 PM IST | Updated on: May 12, 2017 07:20 PM IST
عید میلادالنبی کی چھٹی رد کرنے کے یوگی حکومت کے فیصلے کو الہ آباد ہائی میں کیا گیا چیلنج ، اگلی سماعت 12 جولائی کو

photo : ANI

الہ آباد: الہ آباد ہائی کورٹ نے ریاستی حکومت سے اس نوٹیفکیشن کی نقل طلب کی ہے جس کے ذریعہ مسلمانوں کو عیدمیلاالنبی کی عام تعطیل کو ختم کردیا گیا ہے۔ ریاستی حکومت نے اس ضمن میں نوٹیفکیشن گذشتہ 25اپریل کو جاری کیا تھا۔ ہائی کورٹ میں دائر کی گئی عرضی میں حکومت کے اس فیصلے کو بشیر بیگ نامی ایک شخص نے چیلنج کیا ہے ۔ عرضی کی سماعت چیف جسٹس ڈ ی بی بھونسلے اور جسٹس یشونت شرما نے کی۔

ریاستی حکومت کے وکیل کو عدالت نے نوٹیفکیشن کی پڑھی جانے لائق صاف نقل کیس کی اگلی سماعت کی تاریخ 12 جولائی کو پیش کرنے کے لئے کہا۔ عرضی کی حمایت میں عرضی گذار کے وکیل کا کہنا تھا کہ ریاستی حکومت کو ان چھٹیوں کو ختم کرنے کا کوئی حق نہیں ہے جسے مرکزی حکومت نے نیگوشی ایبل انسٹرومنٹ کی دفعہ25 کے تحت چھٹی قرار دے رکھا ہے۔

عرضی گذار کی دلیل تھی کہ عید میلادالنبی دو دسمبر کو ہے اور اس دن مرکزی حکومت نے قانون کے تحت چھٹی کا اعلان کررکھا ہے ایسے میں ریاستی حکومت کو اس چھٹی کو ختم کرنے کا کوئی قانونی حق نہیں ہے ۔

Loading...

Loading...