دھرویادو پر زیادتی کے خلاف صحافی برادری اورمختلف تنظیموں نے نذرآتش کیا ایس ایس بی کا پتلا، کی جم کرنعرے بازی

ڈومریاگنج۔ منگل کو شہرت گڑھ پریس کلب کی طرف سے صحافیوں اور معاشرے کی مختلف تنظیموں نے متحد ہوکرصحافی دھرویادو پرہوئی زیادتی کولے کر ایس ایس بی کیخلاف جم کرنعرے بازی کی۔

Nov 30, 2016 01:24 PM IST | Updated on: Nov 30, 2016 01:24 PM IST
دھرویادو پر زیادتی کے خلاف صحافی برادری اورمختلف تنظیموں نے نذرآتش کیا ایس ایس بی کا پتلا، کی جم کرنعرے بازی

ڈومریاگنج۔ منگل کو شہرت گڑھ پریس کلب کی طرف سے صحافیوں اور معاشرے کی مختلف تنظیموں نے متحد ہوکرصحافی دھرویادو پرہوئی زیادتی کولے کر ایس ایس بی کیخلاف جم کرنعرے بازی کی اور پولیس پکیٹ چوراہے پر دھرنا دینے کے ساتھ ایس ایس بی کا پتلا نذرآتش کیا۔ دوپہر کے وقت متحد ہوکر صحافی یونین، ٹیچر یونین، تاجر یونین، بار ایسوسی ایشن یونین، لیکھ پال یونین کے علاوہ مختلف سیاسی جماعتوں کے لوگ شامل ہوکر ایس ایس بی مردہ باد، صحافی دُھرو یادو کو انصاف دو اور صحافیوں کوتحفظ اورآزادی کو لے کر نعرے بازی کرتے ہوئے کمیونٹی صحت مرکز، رام جانکی مندر، پولیس پکیٹ چوراہا، تحصیل جا کرپولیس پکیٹ چوراہے پر دھرنا دیتے ہوئے اپنے غم وغصہ کا اظہارکیا ۔وزیر یونین بلاک صدر وریندر تیواری کی صدارت میں منعقد دھرنے سے خطاب کرتے ہوئے ایس پی ریاست ایگزیکٹو رکن اگرسین سنگھ نے کہا کہ صحافی پر ہوئے ظلم کے واقعہ کی آواز اسمبلی میں اٹھائی جائے گی۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ ایس ایس بی کی طرف سے صحافیوں کے ساتھ کی جا رہی بدسلوکی کی لڑائی یکجہتی سے لڑی جائے گی۔ دھرنے کو لیکھ پال یونین خزانچی سدھیرشریواستو، اے بی وی پی محکمہ کنوینر شیوشکت شرما، ثانوی ٹیچر یونین ضلع جنرل سکریٹری رام ولاس یادو، پرائمری ٹیچر یونین بلاک صدر لال جی یادو، صرافہ ایسوسی ایشن صدر شوپرساد ورما، ریاستی خواتین کمیشن رکن زبیدہ چودھری، سابق ضلع پنچایت صدر سادھنا چودھری، سابق سربراہ وجے سنگھ، ونود چودھری وغیرہ نے خطاب کر صحافی پرہوئے ظلم وزیادتی کی سخت الفاظ میں مذمت کی اور عدالتی جانچ کا مطالبہ کرتے ہوئے صحافی کی رہائی کامطالبہ کیا۔

دھرنے کا اختتام شہرت گڑھ پریس کلب کی طرف سے نائب ضلع صدر ارون کمار سنگھ کو وزیر اعظم، وزیر داخلہ اور قومی انسانی حقوق کمیشن کے نام  تین نکاتی میمورنڈم سونپتے ہوئے آزادیٔ اظہارِرائے اورصحافتی آزادی کے مطالبہ پر ہوا۔ دھرنے کی قیادت  صحافی مشتن شیراللہ نے کی۔ معلوم ہوکہ دو گھنٹے تک چلے دھرنے کے دوران شہرت گڑھ-بڈھنی راستہ مکمل طور پر بند رہا،جس سے مسافروں کوکافی دقتوں کاسامنا کرناپڑا۔ اس دوران راکیش تیواری، سوربھ نیگی، پی پانڈے،  سرتاج عالم، سنیل گپتا، چندن ورما، امیراللہ، روہت سنگھ، جے پرکاش پانڈے وغیرہ موجود رہے۔

Loading...

Loading...